پنجاب میں پراونشل سکیورٹی کونسل تشکیل دینے کی منظوری، آرڈیننس جاری

لاہور (نامہ نگار) صوبے میں دہشت گردی کی روک تھام اور سلامتی کی صورتحال کو بہتر بنانے کیلئے پنجاب حکومت نے پراونشل سکیورٹی کونسل تشکیل دینے کی منظوری دیدی ہے۔ اس کی تشکیل کیلئے پنجاب سٹرٹیجک کوارڈینیشن آرڈیننس جاری کردیا گیا ہے۔ پراونشل سکیورٹی کونسل نہ صرف صوبے میں انسداد دہشت گردی اور سکیورٹی پالیسی تیار کریگی بلکہ صوبائی سطح پر کام کرنے والی مختلف قانون نافذ کرنیوالی ایجنسیز کے درمیان تعاون، مانیٹرنگ، امن عامہ برقرار رکھنے اور دہشت گردی کی روک تھام کیلئے ان اداروں کی طرف سے کئے گئے اقدامات کی منظوری دیگی۔ سکیورٹی کونسل کا چیئرمین وزیراعلیٰ ہوگا۔ ارکان میں وزیر قانون، چیف سیکرٹری، سیکرٹری داخلہ، آئی جی پولیس اور حکومت کی طرف سے دو سال کیلئے نامزد کئے گئے پانچ ارکان شامل ہوں گے۔ کونسل کا اجلاس ہر ماہ ہوگا۔ اس کی معاونت کیلئے پراونشل سٹرٹیجک کوآرڈینیشن بورڈ تشکیل دیا جائیگا۔ انسداد دہشت گردی پالیسی اور سکیورٹی کے حوالے سے معاونت کریگا۔ سکیورٹی اور کریمینل جسٹس ایجنسیز کی کارکردگی چیک کرنے اور ان کے درمیان تعاون بہتر بنانے کیلئے کام کریگا۔ اسکے بورڈ کے ارکان میں چیف سیکرٹری، آئی جی، سیکرٹری داخلہ، ایڈیشنل آئی جی سپیشل برانچ اور انسداد دہشت گردی، حکومت کی طرف سے دو سال کیلئے نامزد کئے گئے 3 ارکان شامل ہوں گے۔ سٹرٹیجک کوارڈینیشن بورڈ کے اجلاس کے لئے 6 ارکان کی موجودگی لازمی ہوگی۔
پراونشل سکیورٹی کونسل