ڈرون حملوں کیخلاف جماعتہ الدعوة اور سنی اتحاد کونسل کا ملک گیر یوم احتجاج

لاہور (خصوصی نامہ نگار) جماعة الدعوة پاکستان اور سنی اتحاد کونسل کے زیر اہتمام قبائلی علاقوں میں امریکی ڈرون حملوں کیخلاف جمعہ کو ملک بھر میں یوم احتجاج منایا گیا۔ صوبائی دارالحکومت لاہور سمیت ملک بھر کے مختلف شہروں و علاقوں میں احتجاجی مظاہرے کئے گئے اور جلسوں، کانفرنسوں و اجتماعی خطبات جمعہ کا اہتمام کیا گیا جبکہ حقوق اہلسنت محاذ کے زیر اہتمام بھی خودکش حملوں کے خلاف ملک گیر یوم مذمت منایا گیا اور نماز جمعہ کے اجتماعات میں مذمتی قراردادیں منظور کی گئیں۔ حافظ محمد سعید کی اپیل پر علما کرام اور دینی جماعتوں کے قائدین نے خطبات جمعہ میں قبائلی علاقوں میں امریکی ڈرون حملوں میں بے گناہ پاکستانیوں کے قتل عام کو موضوع بنایا، مذمتی قراردادیں پاس کی گئیں۔ صوبائی دارالحکومت لاہور میںسب سے بڑا مظاہرہ جماعة الدعوة کی طرف سے چوبرجی چوک میں کیا گیاجس میں طلبا، وکلا، تاجروں اور سول سوسائٹی سمیت تمام تر مکاتب فکر اور شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے ہزاروں افراد نے شرکت کی۔ شرکا نے ہاتھوں میںپلے کارڈز، کتبے اور بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر پاکستانی حدود میں گھسنے والے ڈرون طیارے مار گرائے جائیں، بے گناہ پاکستانیوں کی شہادت پر اقوام متحدہ اور دیگر عالمی اداروں کی خاموشی افسوسناک ہے اور ڈرون حملوں کے مسئلہ پر 18 کروڑ پاکستانیوں کے جذبات کی ترجمانی کی جائے، جیسی تحریریں درج تھیں۔ احتجاجی مظاہرہ سے پروفیسر حافظ محمد سعید، عبداللطیف سرائ، طارق گجر، مولانا ابوالہاشم، مولانا محمد ادریس فاروقی، ڈاکٹر ناصر ہمدانی، عبدالغفور ڈوگر و دیگر نے خطاب کیا۔ حافظ محمد سعید نے اپنے خطاب میں کہا کہ امریکہ کو پاکستان پر ڈرون حملوں کی اجازت دے کر وطن عزیز سے غداری کرنے والوں کے نام سامنے لائے جائیں۔ ملک بھر میں ڈرون حملوں کے خلاف بھرپور آواز بلند کی جائے گی، اب فیصلے کرنے کا وقت ہے صرف لوگوں کے جذبات ٹھنڈے کرنے سے قوم مطمئن نہیں ہو گی۔ حکومت ایئر چیف کو ڈرون گرانے کا حکم دے۔ اب سیاست کرنے کا وقت نہیں نوازشریف جرا¿تمندانہ فیصلے کریں گے تو پوری پاکستانی قوم ان کے ساتھ ہو گی اور اگر انہوں نے مشرف ا ور زرداری والے رویے اختیار کئے تو قوم ان کا ساتھ نہیں دے گی۔ انہوں نے کہا کہ بلوچستان، خیبر پی کے، کراچی میں ہونے والے بم دھماکوں اور ٹارگٹ کلنگ میں امریکہ، بھارت، اسرائیل کی ایجنسیاں ملوث ہیں۔ قبل ازیں خطبہ جمعہ کے دوران انہوں نے کہا کہ امریکہ نے ڈرون حملوں کے ذریعہ پاکستان پر جنگ مسلط کر رکھی ہے۔ نوازشریف عالم اسلام کی قیادت کو اسلام آباد میںجمع کر کے عالمی صیہونی سازشوں سے آگاہ کریں۔ عبداللطیف سراءنے کہا کہ نوازشریف کو امریکہ کے سامنے جھکنے کی بجائے ڈرون گرانے ہوں گے۔ ایس ڈی ثاقب نے کہا کہ حکومت بزدلانہ پالیسیاں ترک کرے اور ڈرون حملے گرانے کا حکم دے۔ پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی نے جامع مسجد قبا میں نماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اگر ڈرون حملے رکوانے کے لئے عملی اقدامات کئے گئے توامریکہ کے انخلا کے وقت مشرق وسطیٰ اور خلیج میں رکنے کے لئے کوئی جگہ نہیں ملے گی۔ جماعة الدعوة پاکستان کی اپیل پر ملتان و جنوبی پنجاب میں بھی یوم احتجاج منایا گیا اور پرکئی مقامات پر مساجد کے باہر پرامن علامتی احتجاجی مظاہرے کئے گئے۔ علاوہ ازیں علمائے اہلسنّت نے جمعہ کے اجتماعات میں ڈرون حملوں اور امریکہ کی اسلام و پاکستان دشمن پالیسیوں کے خلاف تقریریں کی اور مذمتی قراردادیں منظور کی گئیں۔ اس موقع پر سنی اتحاد کونسل پاکستان کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا نے جامعہ رضویہ میں جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ ڈرون حملوں کے ذریعے جنگی جرائم کا مرتکب ہو رہا ہے۔ حکومت ڈرون حملوں کے ایشو پر امریکہ کے ساتھ دب کر نہیں ڈٹ کر بات کرے۔ ڈرون حملے امریکہ کی مذمت سے نہیں مرمت سے بند ہوں گے۔ حاجی محمد حنیف طیب نے کراچی میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ ڈرون حملوں کے ذریعے مسلسل پاکستان کی خودمختاری کی دھجیاں اڑا رہا ہے، حکومت ڈرون حملوں کا معاملہ عالمی عدالت انصاف میں لے جائے۔ پیر محمد اطہر القادری نے لاہور میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ڈرون حملوں کی وجہ سے امریکی صدر پر جنگی جرائم کا مقدمہ چلنا چاہئے۔ مفتی محمد حسیب قادری نے المرکز الاسلامی شادباغ لاہور میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اقوام متحدہ ڈرون حملوں کا نوٹس لے۔ علاوہ ازیں حقوق اہلسنت محاذ کے زیر اہتمام خودکش حملوں کے خلاف ملک بھر میں یوم مذمت منایا گیا، نماز جمعہ کے اجتماعات میں خطباءاسلام نے دہشت گردوں کے خلاف مذمتی قراردادیں منظور کیں۔ صوبائی دارالحکومت لاہور میں نماز جمعہ کے بعد داتا دربار چوک میں احتجاجی مظاہرے سے علامہ سید شاہد حسین گردیزی، سید مختار اشرف رضوی، مولانا محمد حسین نقشبندی، پروفیسر دین محمد، علامہ آصف برکاتی، مولانا احمد یار نوری، مولانا شفقت علی خان اور دیگر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جہاد کے نام پر فساد کرنے والوں کےخلاف پاک فوج بے رحم آپریشن کرے اور دنیا بھر میں پاکستان کو بدنام کرنے والے ان اسلام دشمن فسادیوں کو ختم کریں۔
یوم احتجاج / مظاہرے