گو عمران گو کے نعرے بھی لگیں گے، جنرل پاشا میرے خلاف مہم چلا رہے ہیں : جاوید ہاشمی

گو عمران گو کے نعرے بھی لگیں گے، جنرل پاشا میرے خلاف مہم چلا رہے ہیں : جاوید ہاشمی

ملتان ( آئی این پی/ نوائے وقت رپورٹ) جاوید ہاشمی نے کہا ہے کہ آئی ایس آئی کے سابق سربراہ ریٹائرڈ جنرل شجاع پاشا لاہور میں بیٹھ کر میرے خلاف مہم چلا رہے ہیں ‘انہوں نے مجھے ٹیلی فون پر کہا تھا کہ وہ نوازشریف ، خواجہ آصف اور چوہدری نثار کو نہیں چھوڑیں گے‘میں پاشا کی مہم سے نہیں ڈرتا۔میں یہ بتا سکتا ہوں شاہ محمود قریشی نے لاہور میں جنرل پاشا سے ملاقات کی ہے لیکن میں ایسی باتوں میں نہیں پڑنا چاہتا ‘میں نے جنرل ریٹائر ڈ حمید گل کے خلاف کئی سخت باتیں کی ہیں لیکن انہوں نے کبھی کوئی بات کا جواب نہیں دیا۔ وہ ہفتہ کو پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ افواج پاکستان کو اس بات کا ایکشن لینا چاہئے کہ انکے لوگ ضمنی الیکشن کے بارے میں بات نہ کریں اسی طرح میڈیا کو چاہئے کہ وہ بھی ان پر بلاوجہ تنقید نہ کرے۔ انہوں نے کہا کہ آج گو نواز گو کے نعرے لگ رہے ہیں تو کل گوعمران گو کے نعرے بھی لگیں گے۔ انہوں نے کہا کہ میں شاہ محمود کا بھی احترام کرتا ہوں لیکن قوم ان سے پوچھتی ہے کہ جب انہوں نے قومی اسمبلی کے سپیکر کو استعفے دئیے ہیں تو پھر دو ماہ گزرنے کے باوجود انکی تصدیق کیوں نہیں کرتے۔ شاہ محمود بتائیں کہ وہ جھوٹے ممبر ہیں یا سچے اگر سچے ہیں تو استعفیٰ دیکر واپس آئیں۔ تحریک انصاف کی کور کمیٹی میں غریبوں کی آواز بلند کرنے والا کوئی نہیں ہے کور کمیٹی میں سب سے کم اثاثے رکھنے والا میں تھا۔ عمران امیروں کے ساتھ ساتھ غریبوں کی بھی کور کمیٹی بنائیں تاکہ غریبوں کی بات بھی کی جا سکے۔ انہوں نے کہا کہ شاہ محمود قریشی تحریک انصاف کو اپنے رشتہ داروں اور ذاتی دوستوں کی جماعت بنانا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ذوالفقار علی بھٹو ایک پاپولر لیڈر تھے لیکن 1997ء میں نواب صادق قریشی کے کہنے پر قریشی فیملی کو 17ٹکٹ دئیے جس سے سیاسی طور پر بھٹو کو نقصان پہنچا۔ عمران بھٹو کی طرح مقبول لیڈر نہیں ہیں۔
جاوید ہاشمی