معاشی بحران کے خاتمہ کیلئے سنی اتحاد کونسل نے 24 نکاتی فارمولا پیش کر دیا

لاہور (خصوصی نامہ نگار) سنی اتحاد کونسل کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا نے ملک میں معاشی بحران کے خاتمے کے لئے 24  نکاتی فارمولا پیش کر دیا، جس  میں 287 ارب کے قرضے معاف کرائے گئے قرضوں کی وصولی، بنجر اور غیرآباد سرکاری زمینوں کی بیروزگار نوجوانوں کو الاٹ منٹ، چھ لاکھ سالانہ سے زائد تمام زرعی آمدن پر ٹیکس، بیرون ملک سے اثاثوں کی واپسی،  واپڈا، ریلوے، سٹیل مل اور پی آئی اے  میں ایمرجنسی کا نفاذ، بنگلوں اور ریسٹ ہائوسز کی فروخت، وزراء اور بیوروکریٹس کی اضافی مراعات اور سہولتیں ختم، حکومتی سطح پر فضول خرچیاں بند، طورخم بارڈر پر نیٹو کنٹینرز پر بھاری ٹول ٹیکس  کا نفاذ اور وفاقی اور صوبائی وزارتوں، محکموں اور دیگر سرکاری کارپوریشنوں میں سینکڑوں اضافی اور غیرضروری آسامیاں ختم کی جائیں۔