غیر معیاری مشروبات کی بھرمار، شہری مختلف بیماریوں کا شکار ہونے لگے

لاہور(نیوز رپورٹر) غیر معیاری مشروبات پینے ،گرمی کی شدت بڑھنے سے سرکاری ہسپتالوں میں روزانہ سینکڑوں کے قریب شہری مختلف بیماریوںمیں مبتلا ہو کر ہسپتالوں میں داخل ہونے لگے،بتایا گیا ہے کہ لاہور کے میو،سروسز،گنگارام،جنرل ،جناح اور چلڈرن ہسپتال کی ایمرجنسی میں ناکافی سہولیات سے مریض پریشان ہو گئے ۔ہر عمر کے شہری سانس، گیسٹرو،ہیٹ سٹروک،ہائپو ٹینشن،گردن توڑ بخارا ورپیٹ کی بیماریوںمیں مبتلا مریض آنے لگے ۔شہر میں روزانہ9سوکے قریب ان بیماریوں کے مریض ہسپتالوں کی ایمر جنسیوںمیں آرہے ہیں۔ہسپتالوں میں روزانہ آنے والے مریضوں کو معمول میں ہی ٹریٹ کی جارہا ہے اورنارمل چیک اپ کے بعد دسچارج کیا جاتا ہے جس سے بچوں اور معمر افرادمیں بیماری زیادہ طول پکڑنے لگی ہے ،۔ڈاکڑز کا کہنا ہے کہ شہری پانی ابال کرپانی نہیں پیتے جس کے باعث گیسٹروکی بیماری جنم لیتی ہے۔