مجید نظامی کی دوستی اور دشمنی کا واحد معیار پاکستان اور اسلام تھا: علامہ ریاض

مجید نظامی کی دوستی اور دشمنی کا واحد معیار پاکستان اور اسلام تھا: علامہ ریاض

لاہور +فیروز والہ (سپیشل رپورٹر+نامہ نگار) جماعت اہلسنت کے مرکزی ناظم اعلیٰ سید ریاض حسین شاہ نے کہا ہے کہ مجید نظامی کی دوستی و دشمنی کا واحد معیار پاکستان اور اسلام تھا۔ ان کی وفات سے نظریاتی صحافت یتیم ہو گئی ہے۔ وہ پاکستانیت کے علمبردار تھے اور پاکستان کی محبت مجید نظامی کے لہو کے قطرے قطرے میں موجود تھی۔ مجید نظامی نظریہ پاکستان کے جرات مند محافظ تھے۔ وہ ہر جابر سلطان کے سامنے کلمہ حق بلند کرتے رہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے انٹرنیشنل سنی سیکرٹریٹ میں مجید نظامی کی یاد میں منعقدہ تعزیتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تعزیتی اجلاس سے مفتی محمد اقبال چشتی‘ پیر سید شمس الدین بخاری‘ علامہ پروفیسر عبدالعزیز نیازی‘ مولانا شیر محمد نقشبندی‘ مولانا قاری نذیر احمد قادری‘ مولانا قاری فیروز صدیقی نے بھی خطاب کیا۔ پیپلزپارٹی کوٹ عبدالمالک سٹی کے صدر ایوب خان اور جنرل سیکرٹری رانا مقبول احمد جاوید‘ بانی رہنما ایم اے ساجد نے کہا کہ ڈاکٹر مجیدنظامی کے افکار لوگوں کے دلوں پر نقش کر گئے۔ وہ ہمیشہ زندہ وجاوید رہیں گے قوم آنے والی نسلیں ان افکار پر عمل پیرا ہو کر پاکستان کی حفاظت کرتی رہیں گی۔