پنجاب حکومت کا ریونیو بڑھانے‘ قبضہ گروپوں سے بچانے کیلئے سرکاری زمین نیلام کرنیکا فیصلہ

لاہور (میاں علی افضل سے ) حکومت پنجاب کی جانب سے ریونیو میں اضافہ اور سرکاری زمینوں کو قبضہ گروپوں سے محفوظ رکھنے کیلئے صوبائی دارالحکومت میں موجود سرکاری زمینوں کے نیلام کا فیصلہ کیا ہے۔ ابتدائی طور پر صوبائی دارالحکومت کی مختلف تحصیلوں میں 17پلاٹس اور زرعی زمینو ں کی نشاندہی کی گئی ہے جنہیں فروخت کیا جائے گا سرکاری زمینوں کی نشاندہی کے عمل کے بعد ان کی ایویلویشن کیلئے کمیٹی بنا دی گئی ہے جوایلیویشن متعلق اپنی سفارشات بھجوائے گی اور نیلامی کا عمل شروع کر دیا جائے گا ان زمینوں کی نیلامی سے حکومت پنجاب کو 1ارب 4کروڑ وپے تک ریونیو متوقع ہے جن سرکاری زمینوں کی نشاندہی کی گئی ہے ان میں لاہور سٹی کے موضع رنگیل پور کے خسرہ نمبر 1080,1089کی 12کنال‘ خسرہ نمبر183/1کی 5کنال 8 مرلے ، موضع خود پور کے خسرہ نمبر 7124کی 3کنال 16مرلے‘ موضع امیر پور خسرہ نمبر 212کی 3کنال‘ موضع اصل سلمان خسرہ نمبر 11,46,22,303,668,کی 132کنال 13مرلے ‘موضع نت خسرہ نمبر 1057,1132کی 4کنال 13مرلے ، موضع گلوہاڑہ خسرہ نمبر 808,809کی 16کنال ‘ موضع نہلہ خسرہ نمبر 141کی 4کنال 17مرلہ ، موضع نہلہ کے خسرہ نمبر 134,139,149,154,956,1115کی 29کنال 10مرلہ ‘موضع رنگیل پور خسرہ نمبر 346,349کی 21کنال 10مرلے، موضع چومول پور خسرہ نمبر 546کی 2کنال 6 مرلے، موضع نتکے خسرہ نمبر 145کی 16کنال 9مرلے‘ موضع گنجا سندھو کے خسرہ نمبر 95,341کی 3کنال 19مرلے اراضی، موضع مارلور خسرہ نمبر 73کی 6کنال ، موضع ڈولو خورد خسرہ نمبر 3252کی 1کنال 16مرلے اورموضع ڈولوخورد کی 18مرلے اراضی شامل ہے ۔