سانحہ یوحنا آباد: حبس بے جا میں رکھے 14 افراد 6 اپریل کو ہائیکورٹ میں پیش کرنے کا حکم

لاہور (وقائع نگار خصوصی) ہائیکورٹ نے سانحہ یوحنا آباد ہنگامہ آرائی کے شبہ میں حبس بیجا میں رکھے گئے 14 افراد کو 6 اپریل کو عدالت میں پیش کرنے کے احکامات صادر کر دئیے۔ جسٹس عبدالسمیع خان نے کیس کی سماعت کی۔ درخواست گزار ایم اے جوزف نے موقف اختیار کیا کہ یوحنا آباد میں دو افراد کو زندہ جلانے اور ہنگامہ آرائی کے الزام میں پولیس نے متعدد افراد کو غیر قانونی حراست میں رکھا ہے۔ جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کے سربراہ ایاز سلیم نے رپورٹ میں موقف اختیار کیا کہ چودہ افراد کو ابتدائی تفتیش کے بعد شناخت پریڈ کے لئے جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوا دیا ہے جبکہ ایک شخص کو اسی وقت رہا کر دیا گیا تھا۔ مزید چودہ افراد پولیس کے پاس موجود نہیں ہیں۔