ملک میں امن نبیؐ کے نظام سے ہی آئے گا:پروفیسر خاوربٹ

لاہور (خصوصی نامہ نگار) قرآن ہائوس سوسائٹی کے مہتمم پروفیسر ڈاکٹرقلب بشیرخاور بٹ نے کہا ہے کہ یورپ کے تھنک ٹینک نے کہا ہے کہ امن کی بحالی اور کرپشن کے خاتمہ کیلئے علم دولت کی مساویانہ تقسیم پولیس اور عدالتی نظام اور مضبوط مرکزی حکومت کی ضرورت ہوتی ہے۔ اس کے برعکس ہمارے پیارے نبی کریم نے 14 سو سال پہلے جو نظام دیا دنیا میں امن اسی سے آئے گا۔ انہوں نے کہا کہ رسول کریمؐ نے مکہ میں 13 سال صرف فکر آخرت کی تعلیم دی اور بتایا کہ جو خدا کے حکم پر عمل کرے گا اس کو انعامات سے نوازا جائے گا اور جو حکم عدولی کرے گا اسکے لئے آخرت میں سخت عذاب ہو گا۔ انہوں نے کہاکہ اگر حکمرانوں اور حکومتی مشینری کے اندر خوف خدا ہو گا اللہ کے خوف سے نہ کسی کا حق ماریں گے اور نہ  کوئی کرپشن کرے گا۔