نئی نسل کے ذہنوں میں دو قومی نظریہ کو اجاگر کرنا میڈیا کی ذمہ داری ہے: منور حسن

نئی نسل کے ذہنوں میں دو قومی نظریہ کو اجاگر کرنا میڈیا کی ذمہ داری ہے: منور حسن

لاہور (خصوصی نامہ نگار) امیر جماعت اسلامی پاکستان سید منور حسن نے کہا ہے کہ میڈیا کی ذمہ داری ہے کہ وہ قیام پاکستان کی بنیاد، دو قومی نظریہ کو نئی نسل کے ذہنوں میں اجاگر کرے اور نوجوانوں کو گمراہی سے بچانے کیلئے اپنا مثبت کردار ادا کرے، ملک میں سیکولر قوتوں کے عزائم کو ناکام بنانے کیلئے ضروری ہے کہ اسلامی تہذیب و شعائر کو پروان چڑھایا جائے۔ ملک کی نظریاتی سرحدوں کی حفاظت کیلئے نوجوان نسل اسلام کی روشن تعلیمات پر عمل کرے۔ اسلام حیا کے فروغ اور عریانی و فحاشی کی روک تھام کا حکم دیتاہے ۔ ملک میں ہندوانہ کلچر کی حوصلہ شکنی کے لیے میڈیا کو بھی اپنی ذمہ داری پوری کرنی چاہیے ۔ان خیالات کااظہار انہوں نے بریگیڈئر ریٹائر ڈاکٹر غلام مرتضیٰ کی قیادت میں تنظیم اسلامی کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے تنظیم اسلامی کی طرف سے فحاشی و عریانی کیخلاف ملک گیر دستخطی مہم کو سراہتے ہوئے حیا کے کلچر کو عام کرنے کی ضرورت پر زور دیا اور اپنے دستخط بھی کیے۔ انہوں نے کہاکہ بھارتی تہذیب و ثقافت کو پھلنے پھولنے کا موقع دینا کسی صورت بھی ہمارے قومی مفاد میں نہیں۔ انہوں نے کہاکہ بے حیائی کے قلع قمع کیلئے قائم کئے گئے ادارے اپنی ذمہ پوری کریں۔ عوام ملک پر مغربی و ہندوانہ تہذیب مسلط کرنے کی سازشیں ناکام بنادیں۔
منور حسن