سنی اتحاد کونسل نے ’’گوامریکہ گو تحریک‘‘ کو تیز تر کرنے کا فیصلہ کر لیا

لاہور (خصوصی رپورٹر) سنی اتحاد کونسل نے ’’گو امریکہ گو طالبان تحریک‘‘ کو تیز تر کرنے اور امریکی طالبان کا اصل چہرہ قوم کے سامنے پیش کرنے کے لئے ’’وائیٹ پیپر‘‘ شائع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس بات کا فیصلہ سنی اتحاد کونسل کی مرکزی مجلس شوریٰ کے اجلاس میں کیا گیا۔ اجلاس کی صدارت کونسل کے چیئرمین صاحبزادہ حاجی محمد فضل کریم (ایم این اے) نے کی جبکہ اجلاس کے شرکاء میں علامہ سید ریاض حیسن شاہ‘ پیر محمد افضل قادری‘ شروت اعجاز قادری ‘ حاجی حنیف طیب‘ پیر سید محفوظ شاہید‘ سید صفدر شاہ‘ صاحبزادہ فضل الرحمٰن اوکاوڑی‘ ڈاکٹر اشرف آصف جلالی‘ پیر سید اجمل شاہ گیلانی اور دوسرے شامل تھے۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ اہل سنت کا کوئی راہنما دہشت گردوں کے خلاف ہونے والے آپریشن کی مخالفت کرنے والی جماعتوں کے کسی اجلاس اور جلسے میں شریک نہیں ہو گا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صاحبزادہ فضل کریم نے کہا کہ سوات اور وزیرستان میں پاک فوج کے خلاف لڑنے والے امریکی طالبان پاکستان دشمنوں کو خوش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب کے بعض مدارس دہشت گردوں کی پناہ گاہیں ہیں اس لئے جنوبی پنجاب میں بھی تلاش آپریشن کیا جائے اجلاس میں منظور کی گئی قراردادوں میں مطالبہ کیا گیا کہ صوفی محمد پر مقدمہ قائم کیا جائے۔ پاک افغان سرحد کو سیل کیا جائے۔ ڈاکٹر سرفراز نعیمی کی شہادت کی تحقیقات سے اہل سنت قائدین کو آگاہ کیا جائے۔ کالعدم تنظیموں کے اشتہاریوں کو گرفتار کیا جائے۔