مخالفین کو لاہور سمیت ملک بھر میں سرپرائز دیں گے: منظور وٹو

مخالفین کو لاہور سمیت ملک بھر میں سرپرائز دیں گے: منظور وٹو

لاہور (خبر نگار) وفاقی وزےر و پےپلز پارٹی پنجاب کے صدر مےاں منظور احمد وٹو نے کہا ہے کہ الےکشن کا بگل بج چکا ہے‘ اس دفعہ پراکسی الیکشن نہیں ہو گا، آئندہ انتخابات مےں پوری منصوبہ بندی اور حکمت عملی سے مےدان مےں آئےں گے‘ مخالفےن کو لاہور اور پنجاب سمےت پورے ملک مےں سرپرائز دےنگے اور مشکل ترےن انتخابی حلقے مےں خود الےکشن لڑونگا‘ آج سے پےپلز پارٹی سے وابستہ تمام افراد اپنے گھروں پر پےپلز پارٹی کے جھنڈے لہرائےں گے‘ آصف زداری ملک مےں مفاہمتی پالےسی کے بانی ہیں۔ وہ گذشتہ روز پےپلز پارٹی کے 45 ویں ےوم تاسےس کے حوالے سے منعقدہ تقر ےب سے خطاب کر رہے تھے۔ دنیا کی کوئی طاقت پیپلز پارٹی کا مقابلہ نہیں کر سکتی۔ اس موقع پر پی پی پی لاہور کی صدر ثمےنہ خالد گھرکی‘ پی پی پی پنجاب کے جنرل سیکرٹری تنویر اشرف کائرہ، عزیز الرحمن چن، غلام محی الدین دیوان، اسلم گل، مشتاق اعوان، چودھری غلام عباس، ساجدہ میر، منیر احمد خان، نوابزادہ غصنفر علی گل، شبیر احمد میو، زکرےا بٹ، عابد صدیقی، رائے اعجاز احمد، حاجی اعجاز، افنان بٹ، ڈاکٹر ضیا اللہ بنگش، اسلم گڑا، حافظ اخلاق، ظفر مسعود بھٹی، الطاف قرےشی‘ بشریٰ ملک، ناظم حسین شاہ، طلعت خانم بنگش، زاہد ذوالفقار خان، زاہد علی شاہ، فاروق آزاد، اےگزےکٹےو کمےٹی کے ممبران عائشہ گوہر‘ ارشاد علی بھٹی، خواجہ عبدالجبار، عفت بٹ، زرقا بٹ، نرگس خان سمےت دےگر بھی موجود تھے۔ منظور وٹو نے کہا کہ جمہوری کلچر بینظیر، آصف زرداری اور پیپلز پارٹی نے متعارف کرایا آج تمام سےاسی جماعتےں جمہورےت پر متفق ہےں اور آمروں کی پےداوار سےاستدان بھی جمہورےت کی بات کرتے ہےں، پےپلز پارٹی اور آصف زرداری نے ہی آمروں کے ساتھےوں کو بھی جمہورےت سکھائی ہے، پےپلز پارٹی کے کارکنوں اور آصف زرداری کی مفاہمتی پالےسی کی وجہ سے ملک مےں جمہورےت قائم ہے اور پےپلز پارٹی نے ہی ملک مےں پارلےمنٹ‘ عدلےہ‘ الےکشن کمشن آف پاکستان اور مےڈےا سمےت تمام اداروں کو مضبوط کےا ہے۔آصف زرداری آج پاکستا ن کو بچانے اور ملک کے تحفظ کی جنگ لڑ رہے ہےں اور ملکی سر حدوں کو بھی پےپلز پارٹی کی مضبوط حکومت نے مضبوط کر دےا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری ملک مےں مفاہمتی پا لےسی کے بانی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پےپلز پارٹی کو ختم کرنے کےلئے فوجی آمروں اور سےاسی مخالفےن نے بہت کوشش کی مگر وہ اس مےں نہ صرف ناکام ہو ئے بلکہ نیست و نابود ہو گئے مگر پاکستان پےپلز پارٹی آج بھی قائم دائم ہے۔ بزدل کارخانہ دار اور دکاندار تو بن سکتے ہیں مگر لےڈ ر نہےں بن سکتے۔ ذوالفقار علی بھٹو اور بے نظےر بھٹو کے مشن کے مطابق کارکنوں کو ساتھ لےکر سےاست کرےنگے۔ آئندہ انتخابات مکمل طور پر شفاف ہونگے۔ تنویر اشرف کائرہ نے کہا کہ بھٹو نے 45 برس قبل جو چراغ جلایا وہ آج بھی سورج کی طرح روشن ہے۔ بھٹو اور بینظیر نے اس چراغ کو اپنا خون دیا۔ پیپلز پارٹی اسٹیبلشمنٹ کی جماعت نہیں ہے اور نہ ڈکٹیٹر کی گود میں بیٹھ کر بنائی گئی۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری سے گزارش ہے کہ بلاول بھٹو زرداری ہمیں دے دیں۔ ثمےنہ خالد گھرکی نے کہا کہ پےپلز پارٹی پاکستان کی سب سے بڑی سےاسی اور عوامی پارٹی ہے اور آئندہ انتخابات مےں پےپلز پارٹی ملک بھر مےں کا مےابی حاصل کرےگی۔ غلام محی الدین دیوان نے کہا کہ الیکشن بروقت ہوں گے، پاکستان صرف جمہوریت سے قائم رہ سکتا ہے، بجلی، گیس میں اس ملک کو خودکفیل بنائیں گے اور آنیوالے انتخابات جیتیں گے۔ ساجدہ میر نے کہا کہ آصف زرداری نے میاں منظور وٹو کو کانٹے صاف کرنے پنجاب بھیجا ہے۔ الطاف قرےشی نے کہا کہ پاکستان پےپلز پارٹی مفاہمت کی سےاست پر ےقےن رکھتی ہے اور اس مفاہمت کے عمل کو مستقبل مےں بھی جاری رکھے گی۔