زرداری میثاق جمہوریت پر عمل کرتے تو آج حکومت کو مشکلات کا سامنا نہ ہوتا: پرویز رشید

زرداری میثاق جمہوریت پر عمل کرتے تو آج حکومت کو مشکلات کا سامنا نہ ہوتا: پرویز رشید

لاہور (خصوصی رپورٹر) سےنےٹر پروےز رشےد نے کہا ہے کہ صدر زرداری اگر بے نظےر بھٹو اور نوازشرےف مےں طے شدہ مےثاق جمہورےت پر عمل کرتے تو آج حکومت کو سنگےن مشکلات کا سامنا نہ ہوتا۔ وفاقی وزےر اطلاعات قمر زمان کائرہ کے بےان پر تبصرہ کرتے ہوئے سےنےٹر پروےز رشےد نے کہا کہ حقےقت ےہی ہے کہ اگر مےثاق جمہورےت پر عمل ہو جاتا تو ملک بدترےن لوڈ شےڈنگ کے اندھےروں مےں ڈوبا ہوتا نہ ہی کراچی مےں معصوم انسانوں کی لاشےں گرتیں اور نہ ہی بلوچستان کی ےہ حالت زار ہوتی۔ پروےز رشےد نے کہا کہ ماضی گواہ ہے کہ زرداری کی وعدہ خلافےوں نے ہی مسلم لےگ (ن) کو وفاقی حکومت کو خےرباد کہنے پر مجبور کےا۔ پروےز رشےد نے کہا کہ 5 سال گزرنے کے بعد قمر زمان کائرہ جن واقعات کا اعادہ کر رہے ہےں انہےں ان کے سےاق و سباق مےں بھی جھانکنا چاہئے۔ وفاقی حکومت کے روےے کا نتےجہ ہے کہ آج صوبے مرکز سے دور ہوتے جا رہے ہےں۔ علاوہ ازیں پرویز رشید نے چند اخبارات میں شائع ہونے والے اس تاثر کی نفی کی ہے کہ مسلم لیگ (ن) نے کسی بھی سطح پر آئندہ انتخابات میں حصہ لینے کے لئے امیدواروں کا چناو¿ کر لیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ انتخابات میں قومی و صوبائی اسمبلیوں کے لئے امیدواروں کا چناو¿ مرکزی و صوبائی پارلیمانی بورڈوں نے کرنا ہوتا ہے اور یہ بورڈ اپنا کام انتخابات کی تاریخ کا اعلان ہونے کے بعد شروع کرتے ہیں۔