باغبانپورہ: 40سالہ شہری قتل‘ گلشن اقبال اور غازی آباد میں 2 افراد کی پراسرار ہلاکت

لاہور (نامہ نگار) مختلف واقعات میں 2 افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا جبکہ ایک شخص پراسرار طور پر ہلاک ہوگیا۔ تفصیلات کے مطابق باغبانپورہ کے علاقہ محمود بوٹی کا رہائشی 40 سالہ اللہ دتہ گھر جا رہا تھا کہ دیرینہ رنجش پر اس کے مخالف کاشف نے اپنے 3 ساتھیوں راجہ، سنی اور جج سے مل کر فائرنگ کرکے قتل کر دیا۔ پولیس نے مقتول اللہ دتہ کے بھائی عالم مسیح کی درخواست پر مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی جبکہ نعش پوسٹمارٹم کے بعد ورثاءکے حوالے کر دی گئی۔ دریں اثناءگلشن اقبال کے علاقہ کریم بلاک میں ایک مارکیٹ کے بیسمنٹ سے 50 سالہ نامعلوم شخص کی نعش ملی، اطلاع ملنے پر پولیس موقع پر پہنچ گئی اور نعش قبضہ میں لیکر پوسٹمارٹم کیلئے مردہ خانے بھجوا دی لیکن نعش کی شناخت نہیں ہوسکی۔ غازی آباد کے علاقہ میں 70 سالہ شخص گھر میں پراسرار طور پر مردہ پایا گیا۔ عبدالستارریلوے میں ملازمت کرتا تھا، کچھ عرصہ قبل وہ ریلوے سے ریٹائر ہوگیا اور غازی آباد کے علاقے مین بازار میں کرائے کے مکان میں رہائش پذیر تھا، 3، 4 روز سے گھر سے باہر نہیں نکلا تو محلے داروں کو تشویش لاحق ہوئی تو انہوں نے دیوار پھلانگ کر اندر دیکھا تو عبدالستار مردہ حالت میں پڑا تھا۔ شبہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ موت ہارٹ اٹیک سے ہوئی، تاہم اصل حقائق پوسٹمارٹم کے بعد سامنے آئیں گے۔