کویت میں یوم پاکستان کی تقریب

کویت میں یوم پاکستان کی تقریب

کوےت میں کی مزدوروں کی نمائندہ جماعت پاکستان ویلفیئر سوسائٹی کوےت کے زیراہتمام ”یوم پاکستان“ کے حوالے سے ایک رنگا رنگ اور ”شام سہانی“ تقریب کا انعقاد کیا گےا جس میں مزدوروں کے علاوہ پاکستانی کمیونٹی کی بہت بڑی تعداد نے شرکت کی ۔اس تقریب میں مہمان خصوصی سفیر پاکستان افتخارعزیز عباسی تھے جبکہ صدارت پی ڈبلیو ایس کے صدر چوہدری فیاض احمد نے ۔تقریب میں پاکستان کی تمام سیاسی وغیر سیاسی تنظیموں کے صدور نے شرکت اوریہ کوےت یوم پاکستان کے حوالے سے ہونے تقریبات میں سب سے بڑا اجتماع تھا۔پروگرام کی نقابت کے فرائض معروف شاعرہ اور کالم نگار شاہین رضوی نے سرانجام دئےے ۔تقریب کاآغاز تلاوت قرآن حکیم سے ہوا،تلاوت اور حمد ونعت کی سعادت حافظ سفیان نے حاصل کی۔اس کے بعد پاکستان انگلش سکول وکالج کے طلباءوطالبات نے مس بینش اورمس عاصفہ کی قیادت میں پریڈ کے ساتھ قومی ترانہ پیش کیا اورسفیرپاکستان کو سلامی دی گئی ۔سفیر پاکستان نے طلباءوطالبات کو خراج تحسین پیش کیا اور سکول ہذا کی تعریف کی ۔اس کے بعد پی ڈبلیو ایس کے سرپرست اعلی اشتےاق ملک نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ آج کادن ہم ”یوم پاکستان “ منارہے ہیں اورخوشی کا جشن منارہے ہیں زندہ قوموں کے سربلند ہوتے ہیں 23مارچ 1940ءپاکستان کا نام تجویزکیا گےا قلیل عرصہ میں پاکستان پایہ تکمیل کو پہنچایا اس موقعہ پر میں پاکستان ویلفیئرسوسائٹی کے گرینڈ پروگرام کرانے پر انہیں خراج تحسین پیش کرتا ہوں خصوصاً چوہدری فیاض احمد،سجاد احمد ،نورمست خان آفریدی کی دن رات کی کاﺅشوں کو سراہتاہوں۔اسکے بعد پاکستان نیشنل آرگنائزیشن کے رانا منیراحمد نے کہاکہ قیام پاکستان کے بعد ہم مختلف طبقوں میں بٹ گئے سنی ،شیعہ اوردیگر فرقوں کی سرپرستی ختم ہونی چاہئے اورسب میں اتحاد اور مسلمانےت کی پہچان ہونی چاہئے ۔پاکستان ویلفیئر سوسائٹی کے مجلس عاملہ کے چیئرمین نورمست خان آفریدی نے کہاکہ ہم سب پاکستانی ہیں چاہے ہم کسی صوبے سے تعلق رکھتے ہوں ہماری پہچان پاکستان ہے۔ سیکرٹر ی جنرل سجاد احمد نے کہاکہ بزرگ لوگوں کے کام کرنے سے دل دکھتا ہے سخت کام کرنے کی بجائے بڑی عمر کے لوگوں کے لئے آسان کام مہیا کیاجائے اسکے لئے پی ڈبلیو ایس نے ان بزرگ لوگوں کے لئے پلیٹ فارم مہیا کررہاہے۔اس موقعہ پر سفیر پاکستان کی موجودگی میں پاکستان ویلفیئر سوسائٹی کی جانب سے کوےت میں اچھی کارکردگی اورحسن کارکردگی پرپاکستانی کمیونٹی کی خدمات پر مندرجہ ذیل افراد کو اسناد پیش کی گئیں ان میں مسزشاہین رضوی ، استےاق ملک ، رانامنیراحمد ، مس بینش ،محمد رمضان بھٹی ، ڈاکٹر جمیل ہاشمی ، رضوان انجینئر ،پرنسپل عطااللہ خان ، سائیں نواز، جمی میوزیکل بینڈ، یاسرمیوزیکل بینڈ شامل ہیں ۔پاکستان ویلفیئر سوسائٹی کے جن لوگوں کو بہترین پروگرام اورسہانی شام میوزیکل آرگنائز کیا ان کو گولڈ میڈل دئےے جائیں گے ،ان میں نورمست خان آفریدی،سجاداحمد ، عناےت مغل ، عشرت چوہدری،عمران علی،عبدالرحمان جامی، چوہدری الف دین، محمد ایوب بھٹی اور شکیل احمد ڈار شامل ہیں ۔اس موقعہ پر پاکستان ویلفیئر سوسائٹی کے صدرچوہدری فیاض احمد انجم نے کہاکہ23 مارچ1940ءکو منیارپاکستان کے نیچے قرارداد پاکستان پیش کی گئی جس میں پاکستان کا نام تجویز کیا گےا سات سال کے قلیل عرصہ میں قائداعظم محمد علی جناح کی ولولہ انگیز قیادت میں پاکستان معرض وجود میں آیا اوراس وقت ایک ہی جذ بہ تھا بن کررہے گا پاکستان لے کر رہیں گے غلامی میں نہ کام آتی ہیں تدبیریں نہ شمشیریںجو ہوذوق یقین پیداتو کٹ جاتی ہیں زنجیریں،پاکستان میں اس وقت جمہورےت کا پودا پھل پھول رہا ہے پاکستان میں قومی وصوبائی اسمبلیوں کے لئے انتخابات ہورہے ہیں ہمیں اپنا حق رائے ضرور استعمال کرنا چاہئے ۔ووٹ اس کو دیں جو ملک وقوم کی خدمت کا جذبہ رکھتاہوتاکہ بعد میں 5سال پچھتانا نہ پڑے۔انہوں نے کہاکہ آج کا پروگرام ”یوم پاکستان“ تمام پاکستانیوں کا ہے۔انشاءاللہ ایسے پروگرام اورلوگوںکی خدمت کرتے رہیں گے میں ان تمام پروگرام کے تعاون گذار کا شکریہ ادا کرتاہوں جنہوں نے پروگرام میں ہماری مدد کی کیونکہ مزدور ہی جانتا ہے کہ کیسے تکلیف اٹھا کر پیٹ پالا جاتا ہے لہذا ہم نے لوگوں کو پروگرام میں فریش منٹ دی ہے ۔آخر میں سہانی شام میوزیکل شو پیش کیا گےا جس میں جمیل عرف جمی نے گلوکاروں کا تعارف کرایا۔یاسر نے نصرت فتح علی خان کا میراپاکستان گایا۔جمی نے علی مست قلند گایا۔دوبھارتی گلوکارہ بہنوںنے پنجابی گےت ،چن میرے مکھناں،چاندنی راتےں گاکر خوب داد وصول کی۔