سندھ ہائیکورٹ: سینٹ الیکشن روکنے سے متعلق درخواست دوسرے بنچ منتقل

سندھ ہائیکورٹ: سینٹ الیکشن روکنے سے متعلق درخواست دوسرے بنچ منتقل

کراچی (آن لائن) سندھ ہائیکورٹ کے چیف جسٹس فیصل عرب اور جسٹس ظفر احمد راجپوت پر مشتمل دو رکنی بنچ نے سینٹ الیکشن روکنے کے متعلق دائر درخواست دوسرے بنچ منتقل کردی ہے۔ سندھ ہائیکورٹ کے 2 رکنی بنچ نے حاجی گل احمد کی جانب سے 5 مارچ کو ہونیوالا سینٹ الیکشن روکنے اور اسمبلی تحلیل کرنے کے متعلق دائر آئینی درخواست کی سماعت سے معذرت کرلی۔ اسے دوسرے بنچ منتقل کرتے ہوئے کہاکہ وہ خود الیکشن کمشن کے ممبر رہے ہیں لہٰذا وہ مذکورہ درخواست کی سماعت نہیں کریں گے۔ چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ فیصل عرب نے حکم دیا کہ مذکورہ درخواست کی سماعت آج ہی کی جائے جس پر جسٹس محمد علی مظہر اور جسٹس شوکت علی پر مشتمل بنچ نے درخواست کی سماعت کی۔ سرکاری وکیل کو حکم دیا کہ حکومت سے 3 مارچ تک فیکس کے ذریعے جواب طلب کرے کہ انہوں نے عدالتی فیصلے پر عمل کیا ہے یا نہیں۔ درخواست گزار نے چیف الیکشن کمشن، سپیکر قومی اسمبلی سینٹ تمام سیاسی جماعتوں کو فریق بناتے ہوئے موقف اختیار کیا ہے کہ ارکان قومی وصوبائی اسمبلی نے جو حلف اٹھایا ہے وہ اسلام وقرآن کے مطابق نہیں، تمام ارکان اسمبلی حلف نامہ صحیح کرکے دوبارہ حلف اٹھائیں۔ عدالت نے 17 فروری اور 19 مئی کو جو فیصلہ دیا تھا اس پر پارلیمنٹ نے ابھی تک عمل نہیں کیا۔
سندھ ہائیکورٹ