سندھ ہائیکورٹ کا مشرف کی طلبی کیلئے لندن کے اخبار میں اشتہار شائع کرانے کا حکم

کراچی (بی بی سی اردو + ریڈیو نیوز) سندھ ہائیکورٹ نے لندن کے اخبار میں مشرف کی طلبی کا اشتہار شائع کرانے کا حکم دے دیا ہے۔ چیف جسٹس سرمد جلال عثمانی اور جسٹس سجاد علی شاہ پر مشتمل ڈویژن بنچ نے یہ حکم آئین پاکستان سے غداری کے الزام میں مقدمہ دائر کرنے کی ایک درخواست پر سماعت پر جاری کیا۔ عدالت کو بتایا گیا کہ مشرف کو سمن کی تعمیل نہیں ہو سکی ہے کیونکہ وہ لندن میں ہیں‘ جس پر عدالت نے حکم جاری کرتے ہوئے مزید سماعت ملتوی کر دی۔ یہ آئینی پٹیشن مولوی اقبال حیدر نے دائر کی ہے جس میں وزارت قانون، وزارت داخلہ، پرویز مشرف، شریف الدین پیرزادہ‘ ملک قیوم اور اسلام آباد ہائی کورٹ کے رجسٹرار کو فریق بنایا گیا ہے۔ سماعت کے دوران صرف ملک قیوم اور شریف الدین پیرزادہ کے وکیل پیش ہوئے۔ اس درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ صدر آصف علی زرداری نے چیف جسٹس افتخار محمد چودھری اور دیگر ججوں کی بحالی کیلئے جو حکم نامہ جاری کیا وہ آئین کی کسی شق کے تحت نہیں بلکہ عوام کے مطالبے کے تحت کیا گیا ہے۔