کراچی: پرتشدد واقعات، پی پی رہنما سمیت 10 ہلاک، بس میں سلنڈر دھماکہ

کراچی: پرتشدد واقعات، پی پی رہنما سمیت 10 ہلاک، بس میں سلنڈر دھماکہ

کراچی (نوائے وقت رپورٹ + ایجنسیاں) کراچی میں پرتشدد واقعات کے دوران پی پی رہنما سیمت 10 افراد جاں بحق ہو گئے۔ تفصیلات کے مطابق عیسیٰ نگری میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے پیپلز پارٹی کے رہنما زوہیب کو قتل کردیا، انکے قتل کی اطلاع ملتے ہی کارکنوں کی بڑی تعداد ہسپتال پہنچ گئی۔ چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری  نے پارٹی رہنما قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے حملہ آوروں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے۔ پیپلز پارٹی کراچی کے صدر عبدالقادر پٹیل نے کہا زوہیب  پی پی کے حلقہ پی ایس 106 سے امیدوار تھے۔ دریں اثنا سائٹ  تھانہ کے قریب سی این جی سٹیشن پر بس میں گیس بھرواتے ہوئے سلنڈر  دھماکے سے پھٹ گیا جس سے ایک شخص  جاںبحق اور 5 زخمی ہوگئے۔ ادھر کورنگی میں سنگر چونگی  کے قریب کارپر فائرنگ  سے فیکٹری مالک یاسین بلدیہ ٹائون نمبر7 کے علاقے میں ڈاکوئوں کی فائرنگ سے یونس ہلاک ہوگیا۔ گلشن اقبال میں قائداعظم کالونی سے نامعلوم خاتون کی تشدد زدہ نعش ملی۔ ادھر پولیس حکام نے شہریوں کو اغوا کرکے تاوان وصول کرنے والے دو پولیس اہلکاروں کو برطرف کرکے سپیشل انوسٹی گیشن یونٹ کے انسپکٹر چودھری عامر کی تنزلی کرکے اسے سب انسپکٹر بنا دیا گیا۔ ملزموں کی قید سے شاہد اور فہیم نامی شہریوں کو بازیاب کرا لیا گیا۔ علاوہ ازیں رینجرز نے محمد خاں کالونی میں آپریشن  کے دوران 13 جرائم پیشہ افراد کو حراست میں لے لیا موچکو کے علاقے میں 22 سالہ نصیر  کو کلہاڑیوں کے وار کرکے قتل کر دیا گیا گلستان جوہر  میں محکمہ موسمیات  دفتر کے قریب فائرنگ سے نور محمد  ہلاک ہو گیا  نارتھ کراچی سیکٹر  11 میں فائرنگ سے کراچی ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے ڈپٹی ڈائریکٹر عارف خان زخمی ہو گئے۔  دوسری طرف ایڈیشنل آئی جی شاہد حیات نے کہا ہے کہ شہر میں ٹارگٹڈ آپریشن کے دوران قتل کی وارداتوں میں کمی جبکہ سٹریٹ کرائم میں اضافہ ہوا ہے۔کراچی میں ایک تقریب کے دوران انہوں نے کہا کہ  کراچی میں80  فیصد جرائم کی وجہ غیر قانونی موبائل سمز ہیں، اس سلسلے میں انہوں نے وزیراعظم سے بھی بات کی ہے۔ شہر میں ٹارگٹڈ آپریشن شروع کئے جانے کے بعد حالات قدرے بہتر ہوئے ہیں، گزشتہ 6 ماہ کے دوران پولیس نے 70 اغوا کاروں کو گرفتار کیا جبکہ گزشتہ دنوں 2 انتہائی مطلوب اغوا کار مقابلے میں مارے گئے۔