بھارت اور پاکستان ایک دوسرے کو دھمکیاں نہ دیں، ایٹم بم ماریں، قصہ ختم: الطاف

بھارت اور پاکستان ایک دوسرے کو دھمکیاں نہ دیں، ایٹم بم ماریں، قصہ ختم: الطاف

کراچی (نوائے وقت رپورٹ) ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین کی کتاب ’’فلسفہ محبت‘‘ کے انگریزی ترجمے کی کراچی میں تقریب رونمائی نائن زیرو پر منعقد ہوئی۔ ٹیلی فون پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے الطاف حسین نے کہا کہ محبت ایک مشکل مضمون ہے۔ جہاں محبت ہوگی وہاں انصاف، تہذیب اور تعلیم ہوگی۔ وطن پرست ہونا کوئی جرم نہیں۔ انہوں نے کہا کہ علامہ اقبال بھی سچے وطن پرست تھے۔ ہم اکھاڑ پچھاڑ کی سیاست کے عادی ہوچکے ہیں۔ قائداعظم نے کہا تھا اقلیتی ریاستوں کو آزاد ریاستوں میں تبدیل کردیا جائے۔ قائداعظم نے ہندوئوں کی متعصبانہ سوچ دیکھ کر کانگرس سے علیحدگی اختیار کی۔ سب کچھ پیار محبت میں ہے، محبت سے زیادہ طاقتور کوئی چیز نہیں۔ پاکستان میں لوگ مار دھاڑ کی سیاست پر یقین رکھتے ہیں۔ جہاں محبت ہے وہاں ایک دوسرے کو محسوس کرنے کا جذبہ ہوگا۔ علامہ اقبال نے خطبۂ الٰہ آباد میں تقسیم ہندوستان کی بنیاد رکھ دی تھی۔ قائداعظم سب سے پہلے متحدہ ہندوستان چاہتے تھے۔ دہشت گرد حملے کس تعلیم کے تحت کئے جارہے ہیں، دہشت گرد جی ایچ کیو، پولیس، جیلوں، عبادت گاہوں پر حملے کررہے ہیں۔ الطاف حسین نے کہا آپس کے جھگڑے ختم کردیں تو تمام مسائل ختم ہوجائیں گے۔ بھارت پاکستان ایک دوسرے کو دھمکیاں نہ دیں، ایٹم بم ماریں، قصہ ختم!