پولیو سے نجات کیلئے مشترکہ جدوجہد ضروری ہے‘ نثار کھوڑو

پولیو سے نجات کیلئے مشترکہ جدوجہد ضروری ہے‘ نثار کھوڑو

کراچی( وقائع نگار) پاکستان سے پولیو کے خاتمے کو ہمیں ایک چیلنج سمجھنا چاہئے اور سنجیدہ اور مسلسل کوشش کے ذریعہ پولیو سے نجات حاصل کرنی چاہئے اس وائرس کے خاتمے میں ناکامی سے ہمارا عالمی برادری میں وقار مجروح ہورہا ہے ان خیالات کا اظہار سندھ کے سنیئر منسٹر تعلیم محمد نثار کھوڑو نے مقامی ہوٹل میں روٹری کلب انٹر نیشنل کے تعاون سے پاکستان پولیو علماءکمیٹی کے زیر اہتمام ایک ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس ورکشاپ کی صدارت المصطفیٰ ویلفیئر سوسائٹی کے سرپرست اعلیٰ حاجی محمد حنیف طیب نے کی۔ نثار کھوڑو نے کہا کہ میں بہت جلد سندھ کے تمام کالجز کے پرنسپلز کا اجلاس طلب کروں گا تاکہ تمام اساتذہ پولیو سے خاتمے کے لئے طلبا کے ذریعہ گھر گھر پیغام پہنچائیں۔ ا نہوں نے تمام تعلیمی ادارے ‘ دینی مدارس اور مساجد پولیو کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کے جہاد میں اپنا اپنا حصہ شامل کریں۔ علامہ محمد عباس کمیلی‘ شیخ زید اسلامک سینٹر کے ڈائریکٹر ڈاکٹر نور احمد شاہتاز ہمدرد یونیورسٹی کے ڈاکٹر محمد اقبال‘ اردو یونیورسٹی کے ڈاکٹر اعجاز احمد‘ کراچی یونیورسٹی کے ڈاکٹر جلال الدین نوری‘ ڈاکٹر ناصر الدین صدیقی‘ ڈاکٹر پروفیسر غلام عباس قادری‘ محمد حسین لاکھانی‘ مولانا محمد اسد ہزاروی نے بھی خطاب کیا۔