ملک خانہ جنگی کی طرف بڑھ رہا ہے، صورتحال انقلاب سے ہی درست ہو گی: ممتاز بھٹو

کراچی (ثناءنیوز) سندھ نیشنل فرنٹ کے چیئرمین نواب ممتاز علی خان بھٹو نے کہا ہے کہ ملک کی بگڑتی ہوئی صورتحال اب انقلاب کے بغیر درست نہےں ہوسکے گی، حکمران رشوت خوری اور قتل کے مقدمات میں ضمانتیں کرانے اور لوٹی ہوئی دولت کو بیرونی ممالک میں چھپانے میںمصروف ہےں اور اس سلسلے میں سپریم کورٹ سے ٹکر لینے کے لئے بھی تیار ہےں۔ایک بیان میں انہوں نے کہا عوام بدامنی،رشوت خوری، بھوک پیاس، بیروزگاری، بجلی و پانی کی کمی ، صحت و دیگر ایسی مصیبتوں کی دلدل میں پھنسی ہوئی ہے جس کو ختم کرنا تو دور کی بات حکمران کھانے پینے میں اتنا مصروف ہےں کہ اس طرف توجہ ہی نہےں دے رہے،انہوں نے کہا خیبر پی۔ کے، قبائلی علاقے اور بلوچستان میں 10برسوں سے جنگ جاری ہے، پنجاب دھماکوں اور دہشت گردی کا مرکز بنا ہوا ہے اور کراچی بھی اب میدان جنگ بن چکا ہے لیکن حکمران صرف کمیٹیاں بنانے کے سوا کوئی کارنامہ انجام نہیں دے سکے۔ اب یہ دیکھنا ہے کہ عوام کب تک عذاب برداشت کرتے ہوئے سوئے رہیں گے یا پھر اس کے جاگنے کا وقت آچکا ہے۔