ہمارا ایٹمی پروگرام لالی پاپ نہیں جو طالبان کے ہاتھ لگ جائے: ڈاکٹر قدیر

کراچی (اے این این) ممتاز ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا ہے کہ امریکہ ہوش کے ناخن لے، پاکستان کا ایٹمی پروگرام کوئی لولی پاپ نہیں ہے جو طالبان کے ہاتھ لگ جائے، ملکی قیادت شمالی کوریا اور ایران جیسی خارجہ پالیسی اپنائے۔ ’’اے این این‘‘ سے ٹیلی فون پر گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ امریکہ ہمارے ایٹمی اثاثوں کے بارے میں اس طرح گفتگو کرتا ہے جیسے یہ اثاثے کسی شیشے کی دکان میں رکھے ہوئے ہیں جس کے باہر طالبان ہتھوڑا لیکر کھڑے ہیں اور وہ شیشے توڑ کر یہ اثاثے ساتھ لے جائیں گے۔ امریکی حکام خود تو پنٹاگون کے آس پاس 8 کلومیٹر علاقے سے کسی کو گذرنے نہیں دیتے اور پاکستان کے جوہری پروگرام کے بارے میں تبصرے کرتے ہیں‘ انہوں نے کہا کہ امریکی امداد کیلئے میری حوالگی کی شرط کے خاتمے کی خبر ٹی وی پر سنی مجھے حیرت ہے کہ امریکہ کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر جواب دینے کے بجائے اس سے اتنا دب کر کیوں بات کی جاتی ہے؟ انہوں نے کہاکہ میری طبیعت ٹھیک نہیں اسی لئے عوام صحت یابی کی دعا کریں۔
ڈاکٹر قدیر