کراچی میں پینے کے پانی کی قلت سندھ حکومت کی نااہلی ہے‘ایم کیو ایم

کراچی (خصوصی رپورٹر)متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان ) کے اراکین سندھ اسمبلی نے موسم گرماسے قبل شہرقائدکراچی میںپینے کے صاف پانی کی قلت پرگہری تشویش کااظہارکیاہے اوراسے سندھ حکومت کی نااہلی وناکامی قراردیاہے۔ایک بیان میںاراکین سندھ اسمبلی نے کہاکہ موسم گرماکی آمدسے قبل ہی شہرِقائد میں پانی کی شدیدقلت کے باعث شہریوںکومشکلات کاسامناہے جبکہ ٹینکرمافیاایک بارپھرسرگرم عمل ہے جوشہریوںکومہنگے داموںمضرصحت پانی فراہم کررہاہے جس سے شہریوںخصوصاًمعصوم بچوں میںوبائی امراض تیزی سے پھیل رہے ہیں۔اراکین اسمبلی نے کہاکہ سندھ حکومت اپنی کراچی دشمن پالیسیوںکے تحت کراچی کوتھربنانے پرتلی ہوئی ہے جس کے لئے اس نے واٹربورڈکوجبرن اپنی طویل میںلیکراس میںکرپٹ ونااہل افسران کوتعینات کررکھاہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔انہوںنے کہاکہ شہرِقائد میں پانی کے صاف پانی کی شدیدقلت پائی جارہی ہے اورحکومت سندھ اوراس کی ایماءپرتعینات متعلقہ محکمے کے کرپٹ افسران مسلسل بے حسی اورہٹ دھرمی کا مظاہرہ کررہے ہیںجس کے باعث کراچی کے شہری پانی کی بوندبوند کو ترس رہے ہیںاورٹینکرمافیاسے مضر صحت پانی مہنگے داموںپرخریدنے پرمجبور ہیں۔ انہوںنے کہاکہ حکومتی نااہلی کاواضح ثبوت ہے کہ وہ ابھی تک K-4 منصوبہ سست روی کاشکارہے جس سے کراچی میںپائی جانے والی پانی کی قلت پرکافی حد تک قابوپایاجاسکتاہے ۔ اراکین سندھ اسمبلی نے مطالبہ کیاکہ موسم گرما سے شہرِقائد میںپانی کی قلت اورٹینکرمافیاکے ذریعے شہریوںکومضرصحت پانی کی سپلائی کانوٹس لیا جائے اورشہرمیںپانی کی لیکیج کوختم اورK-4منصوبے پرسست روی کوختم کرکے اس تیزی سے مکمل کیاجائے ۔
متحدہ