سندھ ہائی کورٹ نے اداکارہ فاخرہ کو تیزاب سے جلائے جانے کے کیس کو ری اوپن کرنے کی درخواست پر سماعت چھبیس مارچ تک ملتوی کردی

خبریں ماخذ  |  خصوصی رپورٹر
سندھ ہائی کورٹ نے اداکارہ فاخرہ کو تیزاب سے جلائے جانے کے کیس کو ری اوپن کرنے کی درخواست پر سماعت چھبیس مارچ تک ملتوی کردی

سندھ ہائی کورٹ میں پائلر اور دیگر این جی اوز کی جانب سے دائر درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ سن دو ہزار میں بلال کھر نے آرٹسٹ فاخرہ کو تیزاب ڈال کر قتل کرنے کی کوشش کی جبکہ فاخرہ دس سال تک موت و حیات کی کشمکش میں مبتلا رہنے کے بعد انتقال کرگئی۔ اس دوران ماتحت عدالت نے کیس کے مرکزی ملزم بلال کھر اور دیگر کو بری کردیا اور اس فیصلے میں قانون کیے تقاضوں کو پورا نہیں کیا گیا لہذا کیس کو ری اوپن کیا جائے۔ درخواست پر سرکاری وکیل نے عدالت سے مہلت طلب کی جس پر عدالت نے سماعت چھبیس مارچ تک ملتوی کردی۔