سندھ اسمبلی: ون ڈش کی پابندی، صوبے کی تقسیم کیخلاف مذمتی قرارداد منظور

سندھ اسمبلی: ون ڈش کی پابندی، صوبے کی تقسیم کیخلاف مذمتی قرارداد منظور

کراچی(آن لائن) سندھ اسمبلی نے گواہوں کے تحفظ کا بل 2013ءمتفقہ طور پر منظور کر لیا۔ سندھ کی تقسیم اور نئے صوبے کے مطالبے کیخلاف قرارداد بھی متفقہ طور پر منظور کی گئی۔ یہ قرارداد خیر النساءمغل نے پیش کی۔ ایوان نے پاک فوج پر حملے کی پرزور مذمت کی جب کہ لاہور میں بچی کے ساتھ زیادتی میں ملوث ملزمان کو مثالی سزا دینے اور شادی کی تقاریب میں ون ڈش کی قرارداد کو منظور کیا گیا۔ متحدہ قومی موومنٹ نے سابق رکن اسمبلی ندیم ہاشمی کے گرفتاری سے متعلق تحریک التوا پر رہائی کے بعد زور نہیں دیا۔ نیول انٹیلی جینس افسر کی فائرنگ سے 2 افراد کے زخمی ہونے کے واقعہ پر نثار کھوڑو کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دیدی گئی۔ بدھ کو سندھ اسمبلی کا اجلاس قائم مقام سپیکر سندھ اسمبلی شہلا رضا کی صدارت میں ایک گھنٹہ تاخیر سے شروع ہوا۔ دہشت گردی کے واقعات میں شہید ہونیوالے فوجی جرنیل و افسران اورسیاسی جماعتوں کے کارکنوں اور دیگر کے ایصال ثواب کیلئے فاتحہ خوانی کی گئی۔ تحریک انصاف، مسلم لیگ (ن)، مسلم لیگ (فنکشنل) سمیت مختلف جماعتوں کے ارکان نے بل کی حمایت کرتے ہوئے کہاکہ گواہوں کو تحفظ دیے بغیر مجرموں کو کیفرکردارتک پہنچانا ممکن نہیں۔ گواہوں کے تحفظ کا بل ایوان نے متفقہ طورپر منظورکر لیا گیا۔ سید فیصل سبزواری نے کہاکہ مطلوب مجرموں کے خلاف کارروائی کی حمایت کرتے ہیں مگر منتخب نمائندے کے دفترپر چھاپے کا کیا قانونی جواز ہے۔ ایوان میںمتحدہ قومی موومنٹ کے سابق رکن اسمبلی ندیم ہاشمی کی گرفتاری پر سندھ اسمبلی میں تحریک التوا زیر غور آئی۔ متحدہ قومی موومنٹ کے خواجہ اظہارالحسن نے کہا کہ ندیم ہاشی کا باعزت بری ہونا خوش آئند ہے۔ اس موقع پر صوبائی وزیر اطلاعات شرجیل میمن نے کہا کہ ندیم ہاشمی کی رہائی کے بعد تمام الزامات دھل گئے، کراچی کو امن کا گہوارہ بنانا چاہتے ہیں جس کیلئے قانون نافذ کرنے والوں کو فری ہینڈ دیا ہے۔ سب کو صبر و تحمل کا مظاہرہ کرنا چاہئے، قانون نافذ کرنیوالوں کو فری ہینڈ دیدیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ کراچی میں آپریشن کسی سیاسی جماعت کیخلاف نہیں ہو رہا۔ اگرکسی معلومات پرقانون نافذ کرنے والے ادارے میرے گھر پر چھاپہ ماریں گے تو ویلکم کروں گا۔ اجلاس آج تک ملتوی کر دیا گیا۔ الطاف حسین کو قرارداد کے ذریعے سالگرہ کی مبارکباد دی گئی۔ علاوہ ازیں متحدہ کی رابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینر ندیم نصرت نے قائد تحریک الطاف حسین کی 60 ویں سالگرہ پر سندھ اسمبلی میں مبارکباد کی مشترکہ قرارداد کی منظوری کا خیرمقدم کرتے ہوئے اسے انتہائی مثبت اقدام قرار دیا ہے۔