ایس پی ملک مقصود پر قاتلانہ حملے کا واقعہ ڈرامہ نکلا

کراچی (کرائم رپورٹر) کراچی میں پولیس افسران کیخلاف ضابطہ ترقیوں کیخلاف مقدمہ دائر کرنیوالے ایس پی کرائم برانچ ملک مقصود پر قاتلانہ حملے کے مقدمے کی تفتیش نے نیا موڑ اختیار کرلیا۔ قاتلانہ حملے کا واقعہ ڈرامہ نکلا۔ ایس پی ملک مقصود کیخلاف جھوٹا مقدمہ درج کرانے پر کارروائی کا فیصلہ کرلیا گیا ہے۔ ڈی آئی جی ایسٹ طاہر نوید کے مطابق ایس پی کرائم برانچ ملک مقصود نے دو روز قبل لائنز ایریا میں خود پر قاتلانہ حملے کا ڈرامہ رچایا تھا او رمبینہ طور پر اپنے مخالف پانچ پولیس افسران کے خلاف بریگیڈ تھانے میں ایف آئی آر درج کرائی تھی تاہم تفتیش کے دوارن خود ملک مقصود کے گارڈ عبدالرزاق نے جو ان کے ہمراہ تھا۔ بھانڈا پھوڑ دیا اور انکشاف کیا ملک مقصود لائنز ایریا میں فائرنگ سے زخمی نہیں ہوئے بلکہ نیشنل ہائی وے پر رینجرز کے خلاف احتجاج کے دوران مظاہرین کے درمیان سے نکلتے ہوئے فائرنگ سے زخمی ہوگئے تھے۔ ڈی آئی جی ایسٹ کا کہنا ہے گارڈ عبدالرزاق کے بیان کے بعدملک مقصود کیخلاف جھوٹا مقدمہ درج کرانے پر کارروائی کا فیصلہ کیا گیا ہے اور اس سلسلے میں قانونی کارروائی کی جارہی ہے۔