دہشت گردی ہر جگہ ہو رہی ہے‘ استعفی کیوں دوں : وزیراعلی سندھ

دہشت گردی ہر جگہ ہو رہی ہے‘ استعفی کیوں دوں : وزیراعلی سندھ

کراچی(وقائع نگار)وزیراعلیٰ قائم علی شاہ نے کہا ہے کہ سانحہ صفورا چورنگی پر خاموش نہیں رہیں گے ، صفورا چورنگی پر بس حملہ منصوبے کے تحت کی گئی کارروائی لگتی ہے،یہ کس کارروائی کا ردعمل ہے اس حوالے سے کچھ کہنا قبل از وقت ہے۔سندھ کے وزیراطلاعات شرجیل انعام میمن نے کہاہے کہ دہشت گرد بزدلانہ کارروائی کرتے ہیں انہیں ملک کے کسی حصے میں چھپنے کی جگہ نہیں ملے گی ۔ڈپٹی اسپیکرسندھ اسمبلی شہلا رضا نے کہاکہ دشمن اسلام پاکستان کو بدنام کرنا چاہتے ہیں۔میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا کہ امن قائم کرنا اولین ترجیح ہے ہم کراچی میں امن قائم کرکے رہیں گے ،اس واقعے پر ہم خاموش نہیں رہیں گے،یہ جاننے کی کوشش کررہے ہیں کہ یہ کس کی نااہلی ہے۔قائم علی شاہ نے اس موقع پرکہا کہ بہت افسوسناک واقعہ ہوا ہے۔میں نے آئی جی سندھ سے رپورٹ طلب کی ہے۔وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ زخمیوں کو اسپتال میں بہتر طبی سہولتیں فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے۔میڈیا سے بات چیت میں شرجیل میمن نے صفوراچورنگی پر اسماعیلی کمیونٹی کی بس پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردوں نے بزدلانہ کارروائی کرتے ہوئے آسان ہدف کو نشانہ بنایا تاہم انہیں کیفرکردار تک پہنچائیں گے اور انہیں کہیں چھپنے کی جگہ نہیں دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنے والے اداروں نے اپنا کام شروع کردیا اور واقعے میں ملوث ملزمان کو جلد انصاف کے کٹہرے میں لاکر کھڑا کریں گے۔ سندھ اسمبلی کی ڈپٹی سپیکر شہلا رضا نے کہا ہے کہ پہلے بھی تمام جماعتوں کو نشانہ بنایا گیا ہے۔ دشمن اسلام اور پاکستان کو بدنام کر رہا ہے ۔
 قائم علی شاہ