کراچی: باپ بیٹا قتل، متحدہ رہنما حماد صدیقی کے سسرال پر چھاپہ

کراچی: باپ بیٹا قتل، متحدہ رہنما حماد صدیقی کے سسرال پر چھاپہ

کراچی (کرائم رپورٹر) کراچی کے مختلف علاقوں میں منگل کو تشدد اور فائرنگ کے واقعات میں باپ بیٹا ہلاک اور شیر خوار بچے سمیت چار افراد زخمی ہوگئے۔ باپ بیٹے کی نعشیں پاپوش نگر میں ایک مکان سے ملیں جنہیں نامعلوم افراد نے تیز دھار آلے سے گلاکاٹ کر ہلاک کیا تھا۔ پولیس کے مطابق مقتولین کی شناخت75 سالہ جمیل احمد اور اسکے بیٹے50 سالہ شکیل احمد کی حیثیت سے ہوئی جو اکیلے رہتے تھے۔ ادھر لانڈھی میں سٹار گرائونڈ کے نزدیک مسلح افراد کی فائرنگ سے ایک شخص 37 سالہ سیف اللہ ولد میر بادشاہ زخمی ہوگیا۔ ڈاکس کے علاقے مچھر کالونی میں شیر خوار بچہ بلال ولد نواب نامعلوم سمت سے آنیوالی گولی لگنے سے زخمی ہوگیا۔ سپر ہائی وے پر نئی سبزی منڈی کے نزدیک مسلح افراد نے ایک نوجوان26 سالہ محسن احمد کو فائرنگ کرکے زخمی کردیا جبکہ کورنگی نمبر چار میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے 38 سالہ ظفر زخمی ہوگیا۔ قانون نافذ کرنیوالے اداروں نے گلستان جوہر میں ایم کیو ایم کی تنظیمی کمیٹی کے انچارج اور سانحہ بلدیہ ٹائون سمیت کئی مقدمات میں مطلوب حماد صدیقی کو پکڑنے کیلئے اسکے سسرال میں چھاپہ مارا اور برادران نسبتی کو حراست میں لینے کے بعد رہا کر دیا۔ذرائع کے مطابق کراچی کے علاقے گلستان جوہر بلاک تین میں واقع اپارٹمنٹس سے متحدہ قومی موومنٹ کے رہنما حماد صدیقی کے سسرال میں قانون نافذ کرنیوالے ادروں نے چھاپہ مارا اور حماد صدیقی کے دو برادران نسبتی فیصل اور سلمان کو حراست میں لے لیا، دونوں افراد کو ابتدائی تفتیش کے بعد رہا کر دیا گیا۔