الطاف نے مسلم لیگ ن اور پیپلزپارٹی کی حمایت مطالبات کی منظوری سے مشروط کر دی

الطاف نے مسلم لیگ ن اور پیپلزپارٹی کی حمایت مطالبات کی منظوری سے مشروط کر دی

کراچی(آن لائن)ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن ایم کیو ایم کے مطالبات پر عمل درآمد کرنے کی سو فیصد یقین دہانی نہیں کراتی تو مذاکراتی کمیٹی سینٹ کے چیئرمین و ڈپٹی چیئرمین کے انتخابات میں غیر حاضر رہنے کا فیصلہ بھی کر سکتی ہے۔چیئرمین سینٹ اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخابات میں توڑ جوڑ کے بعد سیاسی جماعتیں کچھ لو کچھ دو کا فارمولا اپنانے لگیں۔ ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے رابطہ کمیٹی پاکستان اور لندن کے ارکان خصوصاً سینٹ کے انتخابات کے سلسلے میں تشکیل کردہ کمیٹی کے ممبران سے مخاطب ہوتے ہوئے انہیں ہدایت کی ہے کہ اگر پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن ، ایم کیو ایم کے پیش کردہ مطالبات پر عمل درآمد کرنے کی سو فیصد یقین دہانی نہیں کراتی تو وہ رابطہ کمیٹی اور مذاکراتی کمیٹی کو اختیار دیتے ہیں کہ کمیٹی سینیٹ کے انتخابات میں غیر حاضر رہنے کا فیصلہ بھی کر سکتی ہے۔