کراچی: پولیس اہلکار قتل‘ رشتہ نہ دینے پر گینگسٹر کا گھر پر بم حملہ‘ 2 بہنیں زخمی

کراچی (کرائم رپورٹر + نوائے وقت رپورٹ) کراچی کے علاقے لسبیلہ میں گزشتہ روز نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے پولیس اہلکار کو قتل کر دیا۔ ایس پی طاہر انور کے مطابق جاں بحق اہلکار خالد سی ٹی ڈی میں تعینات تھا اور اس کی کئی لوگوں سے دشمنی چل ہی تھی۔ دریں اثنا نیو کراچی کے علاقے ایوب گوٹھ سے 25 سالہ سید رحمن اعظم کی تشدد زدہ نعش برآمد ہوئی جبکہ اورنگی ٹائون میں فائرنگ سے لڑکی صائمہ زخمی ہو گئی۔ دریں اثنا لانڈھی کے علاقے کوہی گوٹھ میں جرائم پیشہ شخص نے رشتہ دینے سے انکار پر اللہ بچایو کے گھر پر دستی بم پھینک دیا۔ دھماکے سے 2 خواتین ثمرین اور صنم بلوچ زخمی ہو گئیں۔ ساجد کا تعلق گینگ وار سے بتایا جاتا ہے۔ زخمی بہنوں کو جناح ہسپتال داخل کرا دیا گیا۔ رینجرز نے رحیم شاہ قبرستان اورنگی ٹائون میں کارروائی میں بڑی تعداد میں اسلحہ برآمد کر لیا۔ ترجمان کے مطابق دو ایس ایم جی‘ 5 میگزین‘ تین 30 بور پستول‘ ایک رپیٹر‘ دو سیون ایم ایم‘ مختلف قسم کی دو ہزار سے زائد گولیاں‘ دو بلٹ پروف جیکٹس برآمد کی گئی ہیں۔ برآمد اسلحہ ایم کیو ایم عسکری ونگ کے زیراستعمال تھا۔ اسلحہ شہر میں بدامنی پھیلانے اور ٹارگٹ کلنگ میں استعمال ہونا تھا۔