حکومت عوام دشمن ہے، اداروں کی بے تحاشہ نجکاری روکیں گے:بلاول

 حکومت عوام دشمن ہے، اداروں کی بے تحاشہ نجکاری روکیں گے:بلاول

کراچی(آن لائن) پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت عوام دشمن حکومت ہے۔ پیپلز پارٹی امتیازی سلوک کیخلاف جدوجہد جاری رکھے گی۔ ذوالفقار علی بھٹو اور بے نظیر بھٹو نے اپنی جانیں عوام کیلئے قربان کردیں مگر سمجھوتہ نہ کیا، ہم انکے نقش قدم پر چلتے ہوئے عوام کے حقوق کے تحفظ کا عزم کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں انسانی حقوق کی پامالی کیلئے جو کالے قوانین موجود ہیں انکے خاتمے کیلئے پیپلزپارٹی عوام کے تعاون سے بھرپور کوشش کریگی۔ ملک سے دہشت گردی،انتہا پسندی،مذہبی تعصب، فرقہ وارانہ تشدد اور عدم برداشت کیخلاف پیپلزپارٹی دلیرانہ جدوجہد کو جاری رکھے گی۔ ہم عوام کے وسائل سے بنائے گئے اداروں کی نہ صرف حفاظت کریں گے بلکہ انکی بے تحاشہ نجکاری کو بھی روکیں گے اور چند ہاتھوں میں دولت کے ارتکاز کو روکنے کیلئے بھی جدوجہد کو جاری رکھیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کو وزیر اعلیٰ ہاؤس میں پیپلز پارٹی انسانی حقوق ونگ کے زیر اہتمام عالمی یوم انسانی حقوق کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ، پیپلزپارٹی سندھ کے جنرل سیکرٹری تاج حیدر بھی موجود تھے۔ بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پیپلزپارٹی ایک ترقی پسند سوشل ڈیموکریٹک اور محنت کشوں کی پارٹی ہے جس کی بنیاد ذوالفقار علی بھٹو نے رکھی تھی۔پاکستان پیپلزپارٹی کی بنیاد رکھنے والے ایک ایسی سیاسی جماعت بنانا چاہتے تھے جو ایک ترقی پسند، جمہوری، رواداری اور بھائی چارگی پر گامزن معاشرے کی تشکیل کیلئے جدوجہد کرے اور آج عہد کرتے ہیں کہ ہم شہید بھٹو، شہید بی بی کے وژن اور پارٹی کے منشور کے مطابق عوام کی خدمت کرتے رہیں گے اور آئین میں تحریر کردہ تمام بنیادی حقوق کی حفاظت کریں گے۔انہوں نے کہا ہم ملک میں ہر شکل کی انتہا پسندی اور مذہبی تعصب کیخلاف بھی عوام کو یکجا کرکے جدوجہد کرتے رہیں گے۔ ہم تشدد اور بلاجواز گرفتاریوں اور کسی بھی باضابطہ یا بے ضابطہ طاقت کی جانب سے حبس بیجا کی کارروائیوں کیخلاف بھی ثابت قدم رہیں گے۔انہوں نے کہا کہ معاشرے کو ہرفرد کو غیر جانبدار عدالت کے ذریعے انصاف کی فراہمی کا بنیادی حق حاصل ہے اور ہم اس بنیادی حق کی حفاظت کریں گے۔انہوں نے کہا کہ ہم آزادی اظہار اور عوام کی اطلاعات تک رسائی کے حقوق کا تحفظ کریں گے۔ انہوں نے کہا ہم اقلیتوں کو نہ صرف قومی دھارے میں لائیں گے بلکہ انکی عبادتگاہوں کی حفاظت کریں گے اور توہین رسالت کے قانون کے غلط استعمال کو روکنے کیلئے بھی جدوجہد جاری رکھیں گے۔