نہر میں شگاف، وزیراعلیٰ سندھ کی حکم عدولی پر خورشید شاہ نظر بند، بھارتی اخبار

کراچی (نیٹ نیوز / ریڈیو مانیٹرنگ) بھارتی اخبار ہندوستان ٹائمز نے دعویٰ کیا ہے کہ سکھر بیراج، سکھر شہر اور حیدر آباد کو بچانے کےلئے وزیراعلیٰ سندھ نے علی واہسن نہر مےں شگاف ڈالنے کا حکم دیا جس پر وفاقی وزیر خورشید شاہ نے عملدرآمد رکوا دیا۔ فوج نے صورتحال کو سنبھالا اور سکھر بیراج کا کنٹرول سنبھال لیا جبکہ نہر مےں شگاف ڈالنے کے بعد وفاقی وزیر خورشید شاہ کو نظر بند کر دیا، بھارتی اخبار نے کراچی سے اپنے نامہ نگار کی رپورٹ مےں دعویٰ کیا ہے کہ قائم علی شاہ نے نہر مےں شگاف ڈالنے کے احکامات جاری کئے تاہم خورشید شاہ نے ان پر عملدرآمد نہ ہونے دیا کیونکہ نہر مےں شگاف ڈالے جانے سے ان کے حلقہ انتخاب مےں واقع دیہات اور کھیت کھلیان ہزاروں کیوسک پانی مےں ڈوب جاتے، نہر مےں شگاف ڈالنے کے انتظامات کر لئے گئے تھے اور اتوار کی رات کو شگاف ڈالا جانا تھا کہ خورشید شاہ نے وزیراعلیٰ کے احکامات پر عملدرآمد رکوا دیا جس پر فوج نے مداخلت کرتے ہوئے کنٹرول سنبھال لیا اور خورشید شاہ کو نظربند کرا دیا گیا۔ نہر مےں شگاف ڈالنے سے دیہات ڈوب گئے، انجینئروں کا کہنا ہے کہ سکھر بیراج کو بچانے کےلئے نہر مےں شگاف ڈالا جانا ضروری تھا اگر یہ شگاف نہ ڈالا جاتا تو بیراج ٹوٹنے سے سکھر اور حیدر آباد ڈوب جاتے۔