جعفریہ الائنس کا آج ہڑتال‘ مجلس وحدت المسلمین کا کل احتجاج کا اعلان

کراچی/ لاہور ( نمائندہ خصوصی+ مانیٹرنگ ڈیسک+ نیوز ایجنسیاں) بم دھماکوں کیخلاف جعفریہ الائنس نے آج (ہفتہ) کراچی میں ہڑتال جبکہ مجلس وحدت المسلمین نے کل (7فروری) کو ملک گیر احتجاج اور 40روزہ سوگ کا اعلان کیا ہے۔ کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے جعفریہ الائنس کے سربراہ عباس کمیلی نے کہاکہ سپریم کورٹ سانحہ کا ازخود نوٹس لے۔ حکومت نے جاں بحق افراد کے ورثاءکیلئے 20لاکھ روپے فی کس امداد کا اعلان اور دہشت گردی کے نیٹ ورک کے خاتمے سمیت تمام مطالبات تسلیم نہ کئے تو ملک گیر احتجاج تحریک چلائیں گے۔ انہوں نے کہاکہ یوم عاشورہ کی تحقیقات کرکے ملزمان کو کیفرکردار تک پہنچایا جاتا تو یہ دھماکے نہ ہوتے۔ انہوں نے کہاکہ ہمارا صبر کا پیمانہ لبریز ہو رہا ہے۔ حکومت جانتی ہے خودکش بمباروں کو کون تربیت دے رہا ہے لیکن کارروائی نہیں کی جا رہی۔ لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مجلس وحدت المسلمین کے سربراہ مولانا حسن ظفر نقوی نے کہاکہ یہ دہشت گرد وہی عناصر ہیں جنہیں ضیاءالحق کے دور میں ایجنسیوں نے پالا تھا۔ ہمیں دکھ اس بات پر ہے کہ بعض جماعتیں دہشت گردوں کیلئے جواز پیدا کر رہی ہیں‘ یہ دہشت گرد سامراج دشمن نہیں بکلہ سامراج کے ایجنڈوں پر کام کر رہے ہیں اور سامراج کا ایجنڈا پاکستان کو عدم استحکام کا شکار کرکے ایٹمی اثاثوں پر قبضہ کرنا ہے۔ نوائے وقت کراچی سے گفتگو کرتے ہوئے ادارہ تبلیغ تعلیمات اسلام کے سربراہ سید عون نقوی نے جعفریہ الائنس کی سپریم کونسل کے رکن کی حیثیت سے 3روزہ یوم سوگ اور ہفتہ کو ہڑتال کی تائید کی۔ کراچی ٹرانسپورٹ اتحاد کے سربراہ ارشاد بخاری نے بھی بم دھماکوں کے سوگ میں آج ٹرانسپورٹ بند رکھنے کا اعلان کیا ہے۔ علامہ زوہیر عابدی نے کہاکہ 1994ءسے ملک میں دہشت گردی ہو رہی ہے لیکن ابھی تک کسی ایک دہشت گرد کو پھانسی کی سزا نہیں دی گئی اور جس ملک میں مجرم کو سزا نہ ہو گی وہاں تخریبی کارروائیوں سے کون روک سکتا ہے؟۔ مفتی منیب الرحمن نے کہاکہ پاکستان اور کراچی میں جو کچھ ہو رہا ہے وہ افسوسناک اور قابل مذمت ہے‘ ایسی کارروائیاں اسلام‘ انسانیت اور ملک کیخلاف ہیں۔ متاثرین سے صبر و تحمل کی اپیل کرتا ہوں۔ علامہ قمبر عباس نقوی نے کہاکہ کراچی کے واقعات قابل افسوس ہیں‘ قاتلان کربلا اپنا کردار ادا کر رہے ہیں حسینیت بھی اپنا کردا رجاری رکھے گی۔ حافظ ابتسام الٰہی ظہیر نے کہاکہ قرآن نے واضح کر دیا ہے کہ جس نے ایک انسان کو قتل کیا اس نے پوری انسانیت کو قتل کیا اور مسلمانوں کی بات تو اس سے بڑھ کر ہے‘ مسلمانوں کو قتل کرنے والوں پر اللہ کی لعنت ہے۔ علامہ کوکب نورانی نے کہاکہ کراچی جیسے واقعات حکومت کی غلط پالیسیوں اور ہماری بداعمالیوں کا نتیجہ ہے۔ جماعت اسلامی سندھ کے امیر اسد اللہ بھٹو نے کہا کہ بے گناہ انسانوں کے خون سے ہولی کھیلنے والوں کا اسلام اور انسانیت سے کوئی واسطہ نہیں‘ ان کارروائیوں میں امریکی ایجنسی بلیک واٹر اور بھارتی خفیہ ایجنسی را ملوث ہے۔
ہڑتال/ اعلان