آئی جی اور سی سی پی او کو نہیں ہٹائیں گے: وزیر داخلہ سندھ

کراچی (نیٹ نیوز+ ریڈیو نیوز+ آن لائن) وزیر داخلہ سندھ ذوالفقار مرزا نے کہا ہے کہ آئی جی اور سی سی پی او کراچی ایماندار آفیسر ہیں انہیں ان کے عہدوں سے نہیں ہٹایا جائے گا۔ کراچی میں غیرملکی خبررساں ایجنسی کو انٹرویو میں ان کا کہنا تھا کہ ایم کیو ایم نے دونوں افسران سے متعلق کوئی ثبوت فراہم نہیں کیے۔ کراچی میں اسلحہ برآمد کرنے کیلئے کوئی آپریشن نہیں کیا جارہا اگر ایم کیو ایم قائل کر سکتی ہے کہ پولیس افسران نے زیادتی کی ہے تو وہ ان کے خلاف ایکشن لینے کیلئے تیار ہیں۔ ہم پولیس کی کارکردگی سے مطمئن ہیں اگر ایم کیو ایم کو کوئی اعتراض ہے تو انہیں بیٹھ کر مسئلہ حل کرنا چاہیے۔ پولیس نے فسادات میں مرنے والوں کے لسانی تعلق کو ظاہر کیا ہے جو ان کا فرض بنتا ہے۔ ایم کیو ایم کو پولیس کی رپورٹ پر کوئی اعتراض تھا تو وزیراعظم کے سامنے معاملہ اٹھا سکتے تھے لیکن وہاں انہوں نے ایسا تاثر نہیں دیا۔ بریفنگ میں ڈی جی رینجرز نے بھی اپنی رپورٹ پیش کی جو کافی جارحانہ تھی لیکن الزام تراشیاں پولیس پر کی جا رہی ہیں جوکہ نامناسب ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم نے اختلافات کے اظہار کا جو طریقہ اختیار کیا ہے وہ مہذب ملکوں میں مناسب نہیں۔اگر مجھے فری ہینڈ دے دیا جائے اور مخلوط حکومت میں شامل اتحادی جماعتیں متحدہ قومی موومنٹ‘ عوامی نیشنل پارٹی مداخلت نہ کریں اور سیاسی د باؤ نہ ڈالیں تو صوبے سے ایک ماہ میں لینڈ مافیا‘ ڈرگ مافیا‘ جرائم پیشہ عناصر کا صفایا کر دیں گے۔
وزیر داخلہ سندھ