کراچی: مجلس وحدت المسلمین کی ٹارگٹ کلنگ کے خلاف ریلی، سپریم کورٹ کے سامنے دھرنا

کراچی (نوائے وقت رپورٹ) مجلس وحدت مسلمین نے ٹارگٹ کلنگ کے خلاف کراچی میں ریلی نکالی۔ ریلی میں مرد و خواتین اور بچوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ حسن ظفر نقوی نے ریلی کی قیادت کی۔ ریلی کے شرکاء نے مطالبہ کیا کہ حکومت جان و مال کا تحفظ فراہم کرے۔ ریلی نمائش چورنگی سے وزیراعلیٰ ہائوس تک نکالی گئی۔ ریلی کو وزیراعلیٰ ہائوس کی طرف جانے سے روک دیا گیا جس پر شرکاء نے سپریم کورٹ کراچی رجسٹری کے سامنے دھرنا دے دیا۔ ریلی سے خطاب کرتے علامہ حسن ظفر نقوی نے کہا کہ ظلم کے خلاف آواز بلند کرتے رہیں گے۔ کراچی ٹارگٹ کلرز کی آماجگاہ بن گیا ہے۔ سندھ حکومت امن و امان قائم کرنے میں ناکام ہو چکی ہے۔ علامہ مختار امامی نے کہا کہ حکمت شیعہ نسل کشی میں ملوث دہشت گردوں کو گرفتار کرے۔ کالعدم جماعتوں پر پابندی عائد کر کے ان کے دفاتر کو بند کیا جائے۔ جب تک وزیراعلیٰ کو ہٹایا نہیں جاتا دھرنا دیں گے۔ ٹارگٹ کلنگ پر متعدد بار حکومت کو خبردار کیا لیکن ہماری بات پر توجہ نہیں دی گئی۔ ریلی کو روکا گیا تو کراچی کے ہر علاقے میں احتجاج کریں گے رات گئے تک دھرنا جاری تھا۔