ممتاز بھٹو کی مسلم لیگ(ن) میں کوئی حیثیت نہیں‘ الزام لگانا چھوڑ دیں‘ نثار کھوڑو

ممتاز بھٹو کی مسلم لیگ(ن) میں کوئی حیثیت نہیں‘ الزام لگانا چھوڑ دیں‘ نثار کھوڑو

کراچی (اسٹاف رپورٹر )سینئر صوبائی وزیرو پی پی ررہنمانثار احمد کھوڑو نے ممتاز بھٹو کی جانب سے آئندہ بلدیاتی انتخابات میں پیپلزپارٹی پر دھاندلی کرنے کے الزامات پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ممتاز بھٹو سے اپنی پارٹی چھن گئی ہے اور ن لیگ بھی ان کی کوئی حیثیت نہیں ہے ،اس لئے وہ آئندہ بلدیاتی انتخابات میں پی پی پر دھاندلی کے الزمات لگانا چھوڑ دیں۔ سینئر صوبائی وزیر نے کہا کہ پیپلزپارٹی جماعتی بنیادوں پر انتخابات کرانا چاہتی ہے تا ہم ممتاز بھٹو کی اپنی کوئی پارٹی نہ ہونے کی وجہ سے انہیں سندھ میں بلدیاتی انتخابات کے لئے پینل بھی نہیں مل رہا ہے۔ اسیلئے انہیں مشورہ دیتا ہوں کہ وہ کوٹ ادو سے -09 امیدواروں کو ڈھونڈ کر پینل بناکر انتخابات لڑیں ۔نثار احمد کھوڑو نے کہا کہ ممتاز بھٹو کا سندھ میں سیاست کرنے کا باب اب بند ہوچکا ہے اب وہ پنجاب میں جا کر سیاست کریں۔اگر ان کی کوئی اپنی جماعت نہیں ہے تو اس میں ہمار ا کیا قصور ہے ، انہوں نے کہا کہ ممتاز بھٹو نے نواز شریف کو منتیں کرکے اپنے بیٹے کووفاق میں مشیر کروایا ہے۔ پیپلزپارٹی کے رہنما و رکن قومی اسمبلی ایاز سومرو نے کہا پی پی پی عوام کی طاقت میں یقین رکھتی ہے اور کسی بھی قسم کی دھاندلی کا سوچ بھی نہیں سکتی۔ غیروں کی طاقت کا استعمال کرکے ممتاز بھٹو عوام کے سامنے بے نقاب ہوچکے ہیں اور وہ کسی بھی وقت اور کسی بھی الیکشن میں عوامی حمایت حاصل نہیں کرسکتے ، یہ ہی سبب ہے کہ وہ اپنی بچی کچھی سیاسی عزت بچانے کے لئے پی پی پی پر آئندہ بلدیاتی الیکشن میں پہلے سے دھاندلی کا الزام لگا رہے ہیں۔