سعودی کرکٹ سینٹر کی سالانہ تقریب کا اہتمام

جدہ کی ڈائری ....امیر محمد خان
سعودی عرب میں کرکٹ کے فروغ کیلئے ایک طویل عرصے سے کام کیا جارہا ہے، خاص طور پر پاکستانی اور ہندوستانی جو اس کھیل سے خاص رغبت رکھتے ہیں۔ وہ اپنے طور پر چھوٹے اور بڑے پیمانے پر کرکٹ کھیلتے ہیں۔ انٹرنیشنل کرکٹ سینٹر آئی سی سی نے یہاں کے کرکٹ شائقین کو اپنے ساتھ منسلک کر کے سعودی کرکٹ سینٹر ایس سی سی قائم کیا گیا جو آئی سی سی کے ساتھ منسلک ہے۔ اس کے علاوہ دیگر سینٹر بھی قائم کئے گئے جیسے کہ wpca ( westren province cricket center ) , CPCA ( centerl pronvince Cricket Center ) EPCA - eastern Province Cricket Center. etc.....
WPCA کے صدر کیپٹن جنید سکندر، نائب صدر چودھری ذوالفقار اور جنرل سیکریٹری خورشید ظفر ہیں،گزشتہ دنوں انہوںنے اپنے ٹورنا منٹ کے اختتام پر سال بھر کی کارکردگی پر مستحق ٹیموں کو انعامات دینے کیلئے سالانہ ڈنر کا اہتمام کیا۔ جس میں آٹھ سو سے زائد لوگوں کیلئے پرتکلف عشائیہ دیا گیا۔ پاکستان سے فنکاروں رحیم شاہ، نوید جمی اور مشہور و معروف مزاحیہ اداکار و ڈرامہ نگار عبدالرﺅف لالہ کو دعوت دی گئی تھی۔ نوید جمی نے اپنے بھنگڑہ گیتوں ، اور رﺅف لالہ نے اپنے مزاحیہ لطیفوں اور بات چیت سے تقریب کو یادگار بنا دیا۔ پاکستان کے حالیہ سیلاب کی تباہ کاریوں کی وجہ سے مہمان خصوصی قونصل جنرل پاکستان عبدالسالک خان نے حاضرین سے مصیبت ذدہ بھائیوں کیلئے مدد کی اپیل کی۔ جدہ انتظامیہ کے دیگر محکموں کے ذمہ دار افسران کی بڑی تعداد نے بھی شرکت کی۔ WPCA نے انہیں بھی یادگار شیلڈز پیش کیں۔ تقریب کے انعقاد میں خورشید ظفر، حامد رشید ، شفیق احمد نے خصوصی طور پر تعاون کیا۔ تقریب جدہ میںکراﺅن سٹیل کے احاطے میں منعقد کی گئی۔ دیگر افراد جنہوں نے تقریب کے انعقاد کیلئے کام کیا ان میں سہیل شاہ، عاصم شاہ، الیاس مصطفے ، سید وجاہت ،عمران رضاءخان، خلیل قاضی، زاہد قریشی،ندیم شبیر ، غزالی، مدثر، عمران اسد، وسیم مقدوم، ڈاکٹر ضیا، یحی اشفاق ، خالد داﺅد ، ارشد چوہان ، وسیم شیروانی، نجم ازبک شامل ہےں۔ اسکے علاوہ wpca نے تقریب کے کامیاب انعقاد کیلئے حسن عسیری، نجیب، قاسم نقوی ، افتخار حسین، اور پاکستان جرنلسٹ فورم کی کوششوں کو سراہا۔ تقریب کے معاونین میںویسٹرن یونین اور فوکس پیٹرولیم دیگر ادارے شامل ہیں۔
قونصل جنرل عبدالسالک خان نے ویسٹرن پراونس کرکٹ ایسو سی ایشن (WPCA ) کی سالانہ تقسیم انعامات کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس خوشی کے موقع پر ہمیں اپنے ان بھائیوں کو نہیں بھولنا چاہئے جو کہ پاکستان میں اس وقت بدترین سیلاب میں گھرے ہوئے ہیں۔ انہوں نے منتظمین کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب میں کرکٹ کو فروغ دینے کے لئے آپ کی کوششیں قابل تعریف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب پاکستان کے سفیر ہیں اور ہمیں اپنے ملک کا نام روشن کرنے کے لئے ہر ممکن کام کرنا چاہیے ۔ انہوں نے سیلاب کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ اب تک اس سیلاب میں ہزاروں افراد شہید ہوچکے ہیں اور لاکھوں خاندان بے گھر ہو چکے ہیں۔ اس وقت وہ آپ کی طرف امداد کے لئے دیکھ رہے ہیں۔ حکومت پاکستان نے ان کی امداد کے لئے وزیر اعظم ریلیف فنڈ قائم کر دیا ہے ۔ آپ سے درخواست ہے کہ اس فنڈ میں ہر ممکن امداد جمع کروائیں۔ انہوں نے حکومت خادم الحرمین شریفین کا شکریہ اد ا کیا جو ہر مشکل وقت میں پاکستان کی مدد کے لئے سب سے آگے ہوتے ہیں اور آج بھی سب سے پہلے خوراک اور ادویات پر مشتمل پہلی کھیپ ہوائی جہاز میں روانہ کی ہے۔تقریب میںWPCA کے فیز 1 ، فیز 2 اور سمر ٹورنامنٹ میں پہلی دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کرنے والی ٹیموں اور انفرادی طور پر بہترین کھیل کا مظاہرہ کرنے والے کھلاڑیوں کو بھی انعامات دئیے گئے۔ اس موقع پر رحیم شاہ نے سوات کے بارے میں بتاتے ہوئے کہا کہ پہلے وہاں طالبان نے تباہی پھیلائی اور اسکے بعد سیلاب نے وہاں رہنے والے لوگوں کو دربدرکر دیا ہے ۔ اس وقت پورے پاکستان میں سیلاب کی تباہی کے نتیجے میں بے گھر ہونے والے آپ کی امداد کے منتظر ہیں۔ رو¿ف لالہ نے کہا کہ بحثیت پاکستانی سفیر کے میرا یہ فرض ہے کہ پاکستان کے موجودہ حالات کو سدھارنے میں فعال کردار ادا کروں۔ تقریب میں پاکستانیوں کے علاوہ ممتاز سعودیوں نے بھی شرکت کی۔##