”دہشت گردی کی حمایت کا بیان“ قائمہ کمیٹی نے بھارتی وزیر دفاع کیخلاف مذمتی قرارداد منظور کر لی

اسلام آباد (آئی این پی) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے دفاع نے بھارتی وزیر دفاع منوہر پاریکر کے دہشتگردوں سے نمٹنے کےلئے دہشتگردی کی حمایت کے بیان کیخلاف قرارداد مذمت منظور کر لی اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ اس معاملے کو عالمی برادری اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں اٹھائے، اس قسم کی دھمکی آمیز بات بھارت کے پڑوسی ممالک اور خطے سمیت پوری دنیا کے امن کےلئے خطرناک ہے۔ جمعہ کو یہاں پارلیمنٹ ہاﺅس میں شیخ روحیل اصغر کی سربراہی میں کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں بھارتی وزیر دفاع کے بیان پر سخت تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اس کی شدید الفاظ میں مذمت کی گئی ، کمیٹی نے کہا کہ بھارتی وزیر دفاع کا بیان بھارت کے پڑوسی ممالک کے لئے خطرہ ہے اور یہ نہ صرف جنوبی ایشیا بلکہ پوری دنیا کے امن و استحکام کےلئے خطرناک ثابت ہوسکتا ہے۔ دنیا کےلئے یہی وقت ہے کہ وہ اس بات کا یقین کرے کہ بھارت کی حاکمانہ پالیسیاں کیا خطے میں امن و استحکام کے حوالے سے مسائل کا حل ہیں یا ان کی راہ میں رکاوٹ ہیں۔ کمیٹی کے اجلاس میں کہا گیا کہ عالمی برادری کو اب اس بات سے بھی آگاہ ہونا چاہیے کہ بھارتی فوج مقبوضہ کشمیر میں بدترین ریاستی دہشتگردی کررہی ہے جبکہ پاکستان دہشتگردی سے نمٹ رہا ہے جبکہ بھارتی اقدامات خطے میں انتشار پھیلانے کے مترادف ہیں۔

قائمہ کمیٹی