بلوچستان میں لوگوں کو زندہ رہنے کیلئے مطلوبہ خوراک میسر نہیں: یو این او

اسلام آباد (اے پی اے) اقوام متحدہ نے انکشاف کیا ہے کہ بے گھر افراد اور خوراک کی قلت کی بنیاد پر بلوچستان پہلے، بے روزگاری کے حوالے سے خیبرپی کے سرفہرست، پنجاب میں بے روزگاری کا تناسب8.55 فیصد ہے۔ اقوام متحدہ نے پاکستان بھر میں خوراک کی قلت، غربت وافلاس، بے روزگاری اوربے گھرلوگوںکے حوالے سے اعدادوشمار جاری کر دیئے۔ سندھ کے اعدادوشمار دستیاب نہیں ہو سکے۔ اقوام متحدہ کے ڈویلپمنٹ پراجیکٹ اور محکمہ شماریارت کی رپورٹ کے مطابق بلوچستان کے گیارہ اضلاع میں50 فیصد سے زائد آبادی کو زندہ رہنے کیلئے روزانہ 2250 کیلریزی میسر نہیں ہے جبکہ ڈیرہ بگٹی73فیصد غذائیت کے شکار افراد کے ساتھ ملک بھر میں سب سے زیادہ بھوک کا شکار ضلع ہے۔ رپورٹ کے مطابق بلوچستان کے گیارہ فیصد خیبر پی کے کے تین اور پنجاب کے تین اضلاع میں پچاس فیصد یا زائد آبادی کو چوبیس گھنٹے میں کیلریز کی مطلوبہ مقدار میسر نہیں۔