بے جا تنقید بند نہ ہوئی تو توہین عدالت کے اختیارات استعمال کریں گے: سیکرٹری الیکشن کمشن

اسلام آباد (خبر نگار + ثناءنیوز + آئی این پی) سیکرٹری الیکشن کمشن اشتیاق احمد نے کہا کہ ا نتخابات کے بعد الیکشن کمشن پر کچھ حلقوں کی جانب سے کی جانے والی بے جا تنقید بند ہونی چاہئے۔ اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو کمشن توہین عدالت کے اختیارات استعمال کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے امیدوار اسحاق خانوانی نے حلقہ میں دھاندلی کے الزام لگا کر دوبارہ پولنگ کا مطالبہ کیا۔ کمشن نے ان کی بات پوری طرح سنی مگر وہ الزامات ثابت کرنے کے لئے ٹھوس دلائل نہ دے سکے۔ سیکرٹری الیکشن کمشن نے کہا کہ ا نتخابات میں دھاندلی کے حوالے سے دائر کی گئی درخواستوں کو نمٹانے کے لئے ریٹائرڈ ڈسٹرکٹ سیشن ججز کی خدمات حاصل کی جائیں گی اور 20 دن کے اندر ان درخواستوں پر فیصلہ کر دیا جائے گا۔ انہوں نے کہا جہاں دھاندلی کے ثبوت ملے وہاں دوبارہ انتخابات کرائے جائیں گے۔ خاکوانی کے جسٹس ریاض کیانی پر الزامات بلاجواز اور افسوسناک ہیں۔ کمشن پر بے جا تنقید کرنے والے اپنے اندر کا زہر اگل رہے ہیں‘ یورپی یونین اور دیگر عالمی مبصرین انتخابات کو شفاف قرار دے چکے ہیں۔ 70 ہزار پولنگ سٹیشنوں کے رزلٹ کو ویب سائٹ پر اپ لوڈ کیا جائیگا۔ انہوں نے کہا کہ الزامات کا یہ ڈرامہ کب تک چلتا رہے گا۔ ہمارے پاس فضول باتوں میں الجھنے کا قت نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک نجی چینل کے دو اینکر کمشن کے خلاف مہم چلا رہے ہیں، ڈھونڈ ڈھونڈ کر مخالفین کو بلاتے ہیں اور کمشن کے خلاف زہر اگلتے ہیں۔ اگر سسٹم کو نقصان ہوا تو سب کا نقصان ہوگا، اب کمپرومائز نہیں کریں گے۔ جمہوریت نظام اور ملک کی بات ہو گی تو کھل کر بات کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ کمشن نے بڑے پن کا مظاہرہ کیا اور کسی کو توہین عدالت کا نوٹس نہیں دیا۔ انہوں نے کہا کہ خدارا نظام اور جمہوریت کو چلنے دیں۔ انہوں نے کہا کہ ہارنے والوں کی جانب سے دھاندلی کا شور فطری ہے۔