نواز شریف کے اگست میں بیلاروس کے پہلے سرکاری دورہ کا امکان

نواز شریف کے اگست میں بیلاروس کے پہلے سرکاری دورہ کا امکان

اسلام آباد (سہیل عبدالناصر) امکان ہے کہ وزیر اعظم نواز شریف اگست کے مہینے میں بیلا روس کا پہلا سرکاری دورہ کریں گے۔ دفتر خارجہ کے ذرائع کے مطابق بیلا روس کے صدر الیگزینڈر لوکا شنکو نے اپنے حالیہ دورہ پاکستان کے موقع پر انہیں کیوو آنے کی دعوت دی تھی جو وزیر اعظم نے قبول کر لی تھی۔ یہ امر قابل ذکر کے کہ بیلا روس کے صدر نے پاکستانی سرمایہ کاروں کو بیلا روس اور چین کے مشترکہ صنعتی منصوبوں میں شمولیت کی دعوت دی تھی ۔انہوں نے ٹیکسٹائل کے صنعتکاروں کو خاص مراعرات دینے کا وعدہ بھی کیا تھا اور بیلا روس کی طرف سے پاکستان میں سرمایہ کاری کرنے کا اعلان بھی کیا تھا۔ اس ذریعہ کے مطابق پاکستان جلد بیلا روس میں اپنا سفارتخانہ بھی قائم کر رہا ہے لیکن وزیر اعظم کے مجوزہ دورہ کی صورت میں سردست ماسکو میں پاکستان کا سفارتخانہ انتظامات کرے گا کیونکہ روس میں پاکستان کا سفارتی مشن ہی بیلا روس کے ساتھ سفارتی امور کی دیکھ بھال کرتا ہے۔ بیلا روس کے صدر نے اپنے دارالحکومت کیوو میں پاکستان کو سفارتخانہ تعمیر کرنے کیلئے اراضی دینے کی بھی پیشکش کی تھی۔ اس ذریعہ کے مطابق وزیر اعظم نواز شریف بیلا روس اور پاکستان کے درمیان تجارت و سرمایہ کاری کے شعبوں میں تعاون کے وسیع امکانات کے باعث بیلا روس کا دورہ کرنے کی خواہش رکھتے ہیں۔ بیلا روس، روس کا قریبی دوست اور اتحادی ہے جب کہ روس کے ساتھ پاکستان کے تعلقات بھی بڑھ رہے ہیں۔