مسلم لیگی ارکان کی سرکاری کاموں میں مداخلت نثار نے پولیس اور انتظامیہ کو غیر قانونی کام سے منع کردیا

اسلام آباد (آئی این پی) وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے سرکاری معاملات میں مسلم لیگ (ن) کے بعض ارکان کی مداخلت  اور خاص طور پر اپنے حلقہ میں ایسی منفی حرکات کا نوٹس لیتے ہوئے راولپنڈی، اسلام آباد کی انتظامیہ اور پولیس کو مسلم لیگ (ن) کے عہدیداروں اور اپنے رشتہ داروں کا کوئی بھی غیرقانونی کام کرنے سے  منع کردیا ہے۔ وزیر داخلہ نے سختی سے انتظامیہ اور پولیس افسروں کو سرکاری امور کی انجام دہی میں شفافیت اور ایمانداری کو یقینی بنانے کی ہدایت کی ہے۔ وزیر داخلہ کے سٹاف افسر نے چیف کمشنر اسلام آباد‘ راولپنڈی‘ آئی جی اسلام آباد اور آر پی او راولپنڈی کو ایک خط لکھا ہے جس میں کہا ہے کہ وزیر داخلہ نے سرکاری امور میں سیاسی عہدیداروں کی مداخلت کا سخت نوٹس لیا ہے اور کہا ہے کہ حکومت جماعت سے تعلق کا فائدہ اٹھاتے ہوئے بعض سیاسی عناصر سول اور پولیس انتظامیہ کے معاملات میں مداخلت کرکے حیثیت کا ناجائز فائدہ اٹھانے کی کوشش کر رہے ہیں بالخصوص وزیر داخلہ کے حلقے سے تعلق رکھنے والے سیاسی عناصر اپنی حیثیت کا ناجائز فائدہ اٹھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ وزیر داخلہ کے نوٹس سے متعلق تمام ماتحت افسروں کو  واضح ہدایات جاری کی جائیں کہ وہ اپنے امور کی انجام دہی میں شفافیت اور ایمانداری کو یقین بنائیں۔ کسی بھی سیاسی نمائندے یا وزیر داخلہ کے رشتہ دار کو سیاسی امور میں مداخلت کا کوئی اختیار حاصل نہیں۔ وزیر داخلہ کی طرف سے جو بھی ہدایت دی جائے گی وہ سرکاری طور پر ہو گی۔