عالم اسلام افراتفری کا شکار ہے‘ او آئی سی مردہ ہو چکی: فلسطینی سفیر

اسلام آباد (جاوید صدیق) پاکستان میں فلسطین کے سفیر ولید احمد علی نے کہا ہے کہ اسرائیل مشرق وسطیٰ کے اسلامی ملکوں میں برپا  ’’بہار عرب‘‘ سے فائدہ اٹھا رہا ہے اس لئے وہ فلسطین کے مسئلہ کے حل کرنے کے لئے کوئی سنجیدہ اقدام کرنے کے لئے تیار نہیں۔ گزشتہ روز ایوان صدر میں یوم پاکستان کے سلسلہ میں منعقدہ تقریب میں نوائے وقت سے بات چیت کرتے ہوئے فلسطینی سفیر نے کہا کہ مصر سمیت خلیج اور دوسرے ملکوں کے حالات اسرائیل کے لئے اطمینان کا سبب ہیں۔ صدر محمود عباس نے واشنگٹن میں امریکی قیادت سے ملاقاتیں کی ہیں لیکن وہ بے نتیجہ رہیں کیونکہ اس وقت عالم اسلام ایک افراتفری کا شکار ہے۔ فلسطینی سفیر نے کہا کہ او آئی سی تو اب بالکل مردہ تنظیم ہے‘ یہ تنظیم کشمیر اور فلسطین کے مسائل حل کرنے کے لئے قائم کی گئی تھی لیکن اب ان دونوں مسائل کے حل کے لئے کیا ہو رہا ہے۔ فلسطینی سفیر نے کہا کہ جب تک اسلامی دنیا کے حالات بہتر نہیں ہوتے کشمیر اور فلسطین کے مسائل کے حل کے لئے ٹھوس پیشرفت نہیں ہو سکتی۔