پیپلز پارٹی نے حکومت اور عوامی تحریک کے درمیان مصالحت کرانے کی پیشکش کر دی

اسلام آباد (آن لائن) پاکستان پیپلزپارٹی نے لاہور سانحے کے نتیجے میں پیدا ہونے والے حالات کی بہتری کیلئے وفاقی حکومت اور مسلم لیگ (ن) کو عوامی تحریک کیساتھ مذاکرات کیلئے ثالثی کی پیشکش کردی جبکہ تحریک انصاف نے بھی معاملات کو جلداز جلد حل کرنے اور رانا ثناء اللہ سمیت سخت بیانات دینے والے وزراء کو بیانات سے روکنے کا مطالبہ کیا ہے۔ ذرائع نے  بتایا ہے کہ پیپلزپارٹی نے جمہوریت کو ڈی ریل ہونے سے بچانے کیلئے مسلم لیگ (ن) کو پیشکش کی ہے کہ اگر وہ چاہے تو پی پی پی لاہور واقعہ میں عوامی تحریک سے بات کرکے معاملات کو ٹھنڈا کرنے کی کوشش کرسکتی ہے تاہم اس کیلئے حکومت کو وزراء سمیت اپنا مزاج کو ٹھنڈا رکھنا ہوگا کہیں ایسا نہ ہو کہ حالات بے قابو ہوجائیں۔ قائد حزب اختلاف سید خورشید احمد شاہ کے ذریعے بھجوائے گئے پیغام میں وفاقی حکومت کو کئی دیگر تجاویز بھی دی گئی ہیں جبکہ تحریک انصاف نے بھی اس حوالے سے اپنا کردار ادا کرنے کی مشروط حامی بھرلی ہے۔ بعض دیگر سیاسی جماعتوں نے بھی اس معاملے کو باہمی گفت و شنید اور مذاکرات سے حل کرنے کی استدعا کی ہے۔