ڈاکٹر عافیہ کی مدد کےلئے تحقیقاتی ٹیم روانہ کر رہے ہیں: وزیر داخلہ

اسلام آباد (نیوز ایجنسیاں) وزیر داخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ ڈاکٹر عافیہ کی مدد کے لئے تحقیقاتی ٹیم امریکہ روانہ کی جا رہی ہے‘ امریکہ کے ساتھ مل کر مشترکہ آپریشن نہیں کر رہے‘ نیب کے سابق سربراہ سیف الرحمن نے ہمارے خلاف جھوٹے کیس بنانے کے لئے کوئی جگہ نہیں چھوڑی‘ ان کی گرفتاری کے لئے انٹرپول سے رابطے میں ہیں۔ حکومت کو بددعائیں دینے والے آئندہ الیکشن کا انتظار کریں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز پارلیمنٹ ہاوس کے باہر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ وزیر داخلہ نے مزید کہا کہ ظالمان کو وارننگ دیتے ہیں کہ ہتھیار پھینک دیں۔ بیرون ملک رہنے والے پاکستانی اپنی رقوم بنک کے ذریعے بھجوائیں۔ سیف الرحمن نے ہمارے اوپر چھوٹے مقدمات قائم کئے۔ حکومت سیاسی انتقام کی سیاست نہیں کر رہی اور نہ کرے گی۔ ملک کی معاشی صورتحال بہتر ہوئی ہے۔ سرمایہ کاری میں اضافہ ہوا ہے۔ رحمن ملک نے کہا کہ 3بڑے ہنڈی ڈیلر اور 3 لائسنس ہولڈر کو گرفتار کیا گیا ہے اس سے روپے کی قدر میں بہتری آئی ہے۔ تمام بیرون ملک کام کرنے والے پاکستانیوں سے اپیل ہے کہ اپنی رقوم بنک کے ذریعے یہاں بھجوائیں‘ ہم کسی ملک کو پاکستان میں آپریشن کی اجازت نہیں دیں گے۔دریں اثناءوزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے رحمن ملک کو اختیارات کے ناجائز استعمال کے کیس میں باعزت بری ہونے پر مبارکباد پیش کی۔