ٹربیونلز الیکشن مقدمات کے فیصلے قانون کے مطابق جلد کریں: سپریم کورٹ

ٹربیونلز الیکشن مقدمات کے فیصلے قانون کے مطابق جلد کریں: سپریم کورٹ

اسلام آباد (وقائع نگار) سپریم کورٹ نے تحریک انصاف کے جنرل سیکرٹری جہانگیر خان ترین کی اپیل منظور کرتے ہوئے الیکشن ٹوبیونل کی سماعت روکنے کے لاہور ہائیکورٹ کے حکم امتناعی کو ختم کر دیا ہے اور ٹربیونل کو چار ہفتوں میں ترین کیس کا فیصلہ کرنے کی ہدایت کی ہے۔ اس کے علاوہ عدالت نے سیکرٹری قانون و انصاف کمشن کو ہدایت کی ہے کہ وہ اس فیصلے کی نقول ملک کے تمام ٹربیونلز کو بھجوانے کا حکم دیا ہے اور ساتھ ہی ہدایت کی ہے کہ ٹربیونلز الیکشن مقدمات کے فیصلے قانون کے مطابق جلد کریں۔ پیر کو چیف جسٹس افتخار محمد چودھری اور جسٹس جواد ایس خواجہ پر مشتمل دو رکنی بنچ نے کیس کی سماعت کی تو جہانگیر ترین کی جانب سے حفیظ پیرزادہ پیش ہوئے اور بتایا کہ عدالت کے کئی بار نوٹس کرنے کے باوجود مخالف صدیق خان بلوچ کے وکیل میاں عباس پیش نہیں ہو رہے حالانکہ وہ حج سے بھی 6 نومبر کو واپس آ چکے ہیں۔ عدالت نے مخالف وکیل کے پیش نہ ہونے کی وجہ سے حکم امتناعی ختم کرتے ہوئے مذکورہ حکم نامہ جاری کر دیا۔