ای او بی آئی کرپشن کیس، سپریم کورٹ نے ڈی ایچ اے کے اکائونٹ کی تفصیلات طلب کر لیں

ای او بی آئی  کرپشن  کیس،  سپریم کورٹ  نے  ڈی ایچ اے کے اکائونٹ  کی  تفصیلات طلب کر لیں

اسلام آباد (آئی این پی) سپریم کورٹ نے ای او بی آئی کرپشن کیس کی سماعت دسمبر کے پہلے ہفتے تک ملتوی کرتے ہوئے ای او بی آئی کے بورڈ آف ٹرسٹیز کی جانب سے غیر قانونی معاہدے کرنے کے ذمہ داران کے خلاف کارروائی کے حوالے سے جواب طلب کرتے ہوئے ڈیفنس ہائوسنگ اتھارٹی کے اکائونٹ کی تفصیلات طلب کر لیں۔ عدالت نے ای سی ایل میں فریقین کے نام ڈالنے کے حوالے سے ایف آئی اے کے خلاف درخواستوں پر فریقین سے جواب طلب کر لیا۔پیر کو  جسٹس تصدق حسین جیلانی کی سربراہی میں 3رکنی بینچ نے مقدمے کی سماعت کی تو ای او بی آئی کے وکیل ایس اے رحمان نے عدالت کو بتایا کہ ادارے کے بورڈ آف ٹرسٹیز نے 18 پراپرٹیز کی قیمتوں کے تعین کرانے کا فیصلہ کیا ہے جس کے بعد یہ فیصلہ کیا جائے گا کہ ای او بی آئی نے رقم رکھنی ہے یا جائیداد واپس کرنی ہے۔ بورڈ آف ٹرسٹیز نے معاہدے کرتے وقت کرمنل پہلوئوں کو سامنے نہیں رکھا۔ مجرمانہ کردار ادا کرنے والوں کے خلاف کارروائی ضروری ہے۔ ای سی ایل میں نام ڈالنے اور ایف آئی اے کے خلاف متعدد فریقین کی درخواستوں پر نوٹس جاری کرتے ہوئے فریقین سے جواب طلب کر لیا۔ ایف آئی اے کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا کہ جب سے عدالت نے مقدمے میں ملوث افراد کو ہراساں نہ کرنے کا حکم جاری کیا ہے۔ مقدمے میں پیش رفت نہیں ہو رہی۔