حماد عادل کی نشاندہی پر گھر سے اسکے ساتھی کی نعش برآمد، ملزم سے شہباز بھٹی کے قتل کا اعتراف کرایا گیا: تفتیشی اہلکار

اسلام آباد (نوائے وقت رپورٹ) بارہ کہو بارود بھری گاڑی کیس کے ملزم حماد عادل کی نشاندہی پر ساتھی ملزم کی لاش اس کے گھر سے برآمد کر لی گئی۔ پولیس کے مطابق ملزم حماد کے ساتھی حارث کی لاش گھر کے صحن سے ملی۔ ملزم حارث ایف آئی اے کے پراسیکیوٹر کے گارڈ کی فائرنگ سے مارا گیا تھا جسے حماد عادل نے اپنے ساتھی کی لاش اپنے گھر میں دفنا دی تھی۔ دریں اثناءمقدمات کی تفتیش کرنے والی ٹیم میں شامل ایک اہلکار کا کہنا ہے کہ ملزم نے اعتراف جرم کیا نہیں بلکہ اس سے یہ اعتراف کروایا گیا ہے۔ متعلقہ پولیس سٹیشن کے انچارج فیاض رانجھا کے مطابق ملزم نے دوران تفتیش بتایا کہ اس نے محمد تنویر کے ساتھ مل کر مسیحی برادری سے تعلق رکھنے والے سابق وفاقی وزیر شہباز بھٹی اور فوج کے سرجن جنرل لیفٹیننٹ جنرل مشتاق بیگ کو قتل کرنے کی منصوبہ بندی کی تھی۔