این اے 5، 27، خواتین کو ووٹ کا حق نہ دینے سے متعلق پشاور ہائیکورٹ کا فیصلہ کالعدم

اسلام آباد(نمائندہ نوائے وقت) سپریم کورٹ نے کے پی کے حلقہ این اے 5 اور این اے 27 میں ضمنی انتخابات میں خواتین کو ووٹ کا حق نہ دینے سے متعلق پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف ڈاکٹر عمران خٹک کی دائر درخواست سماعت کے لیے منظور کرتے ہوئے پشاور ہائی کورٹ کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔ وکیل نے عدالت کو بتایا کہ حالیہ عام انتخابات 2013ءمیں خواتین کی ووٹنگ کا ٹرن آﺅٹ 56فیصد تھا لیکن ضمنی انتخابات میں کم ہو کر صرف 49فیصدرہ گیا۔ پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ یہ ہائی کورٹ کا دائرہ اختیار نہیں ہے کہ وہ اس پر ازخود نوٹس لیتی، ہائی کورٹ نے اپنے اختیارات سے تجاوز کیا۔ اس پر جسٹس انور ظہیر جمالی نے ریمارکس دیئے کہ یہ معاملہ الیکشن کمیشن سے متعلق ہے اگر کسی کو اعتراض ہے تو وہ الیکشن کمیشن سے رجوع کرے۔