ترک ہیکر کا نادرا اور ایف آئی اے کے ریکارڈ تک رسائی کا دعوی

ترک ہیکر کا نادرا اور ایف آئی اے کے ریکارڈ تک رسائی کا دعوی

اسلام آباد (آن لائن) حال ہی میں ویب سائٹ گوگل پاکستان اور دیگر 284 ڈاٹ کام ڈومینز ہیک کرنےوالے ترک ہیکر نے دعوی کیا ہے کہ اس کو نادرا اور ایف آئی اے کے ریکارڈ تک بھی رسائی حاصل ہے اور وہ کروڑوں پاکستانیوں کا ڈیٹا حاصل کر سکتا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق ٹیک کرنچ کی جانب سے جاری رپورٹ میں ترک ہیکر ای بوز نے دعوی کیا ہے کہ اس نے 24 نومبر کو انٹرنیٹ اندراج کی مجاز اتھارٹی پی کے این آئی سی کے سرور تک رسائی حاصل کرلی۔ گوگل پاکستان سمیت سینکڑوں ویب سائٹس کو ہیک کرلیا تھا۔ ٹیک کرنچ میں سائٹ کو دیئے گئے انٹرویو میں ترک ہیکر نے نادرا اور ایف آئی اے کے سرور تک رسائی کا دعوی کیا ہے۔واضح رہے کہ نادرا کے پاس ہر پاکستانی شہری کا شخصی ڈیٹا جبکہ ایف آئی اے کے پاس خفیہ ڈیٹا محفوظ ہوتا ہے جو اگر ظاہر ہو جائے تو ملکی سلامتی کوخدشات لاحق ہوسکتے ہیں۔ 20 سالہ ہیکر نے مزید کہا کہ ایسا وہ پاکستانی ہیکرز کو نیچا دکھانے کےلئے کررہا ہے جو دنیا کے بہترین ہائیکرز ہونے کا دعوی کرتے ہیں۔ ترک ہیکرز نے مزید کہا کہ پاکستان کے سرور انتہائی غیرمحفوظ ہیں اور مختلف طریقہ اپنا کر کوئی بھی ہیکرز مرکزی سرور تک رسائی حاصل کرسکتا ہے۔ دوسری طرف نادرا کے حکام نے ان دعوﺅں کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ نادرا کا سرور مکمل سکیورٹی کنٹرول میں ہے۔